اسلام آباد میں مندر کی تعمیرکی مذمت کرتے ہیں،عبدالبصیر المدنی

اسلام آباد میں مندر کی تعمیرکی مذمت کرتے ہیں،عبدالبصیر المدنی

  

رستم(نمائندہ پاکستان) مرکزی جمعیت اہل حدیث خیبر پختون خواہ کے نائب امیر مولانا عبدالبصیر المدنی اور نائب جنرل سیکرٹری مولانا عمر عبدالعزیز نے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ اسلام آباد میں مندر کی تعمیر کے کام کے آغاز کی مذمت کرتے ہے، اس وقت پوری دنیا کورونا وائرس کی مہلک عالمی وبا سے نمٹنے کی کوشش کر رہی ہے لیکن حکمران اسلام دشمنی ایجنڈے کو بے رحمی سے آگے بڑھانے میں مصروف ہے، دین اسلام ایک اسلامی ملک میں غیر مسلموں کی عبادت خانوں کی تعمیر نو کی بالکل اجازت نہیں دیتا، مملکت خداداد ایک اسلامی ملک ہے اس میں مندر کی تعمیر امت مسلمہ کو اختلافات میں دھکیلنے کی ایک سازش اور ریاست مدینہ کی توھین ہے جسے جمعیت اھل حدیث کبھی کامیاب نہیں ہونے دے گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے صحافیوں سے گفتگو کے دوران کیا۔ انہوں نے اسلام آباد میں مسجد توحید اھل حدیث کی مسماری اور مندر کی تعمیر کی پر زور مذمت کرتے ہوئے آئمہ مساجد کو پیغام دیا کہ آئندہ خطبہ جمعہ میں حکمران وقت کی موجودہ پالیسی کی پر زور مذمت کی جائے اور عوام کو واضح کیا جائے کہ یہ ایک اسلام دشمن سازش ہو رہا ہے جو نظریہ پاکستان کے سراسر خلاف ہے موجودہ دور میں پاکستان کے دارالخلافہ اسلام آباد میں مندر تعمیر کرنا مسلمانان پاکستان بلکہ آئین پاکستان کے خلاف ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا ملک پاکستان اسلام کے نام پر بنایا گیا ہے اس میں اسلامی نظام کی رائج کیا جائے ریاست مدینہ کے بلند بانگ نعرے لگانے والے مدینہ ریاست نہ بنا سکے بلکہ اسلامی عبادت گاہ کو مسمار کرنے اور انکی جگہ غیر مسلموں کی عبادگاہیں تعمیر کرنے پر تلے ہوئے ہے جس کی ہم کسی صورت اجازت نہیں دینگے انہوں نے حکومت سے پرزور مطالبہ کیا کہ ماڈل ٹاون اسلام آباد کے خطیب حافظ آصف نذیز کو بیٹوں سمیت رہائی دی جائے اور سرکاری خرچ پر مزکورہ مسجد کی ازسرنو تعمیر کیا جائے بصورت دیگر مرکز جمعیت اہلحدیث اس کے خلاف احتجاج پر اتر آئے گی۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -