عمران خان کو شرم آنی چاہئیے کہ اپنے اعلان کے باوجود اُنہوں نے ایک بار بھی۔۔۔بلاول بھٹو زرداری ملک بھر کے ڈاکٹرز کے وکیل بن گئے

عمران خان کو شرم آنی چاہئیے کہ اپنے اعلان کے باوجود اُنہوں نے ایک بار ...
عمران خان کو شرم آنی چاہئیے کہ اپنے اعلان کے باوجود اُنہوں نے ایک بار بھی۔۔۔بلاول بھٹو زرداری ملک بھر کے ڈاکٹرز کے وکیل بن گئے

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹوزرداری نےکہاہے کہ عمران خان کو شرم آنی چاہئیے کہ اپنے اعلان کے باوجود اُنہوں نے ایک بار بھی ڈاکٹرز سے مشاورت نہیں کی،یہ کیسے حکمران ہیں کہ ڈاکٹرز کے بجائے غیرمتعلقہ لوگوں سے پوچھ رہے ہیں کہ وباء سے کیسے نمٹا جائے؟سندھ میں کورونا وائرس سے صحت یاب ہونے والے مریضوں کی تعداد سب سے زیادہ ہے,ینگ ڈاکٹرز کا رسک الاؤنس دینے پر سندھ حکومت سے اظہار تشکر, سندھ جلد ڈاکٹروں کی سیکیورٹی کے لئے بھی قانون سازی کرے گا۔

تفصیلات کے مطابق بلاول بھٹو زرداری کی سربراہی میں ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشنز کے نمائندگان کے الگ الگ ویڈیو لنک اجلاس لاہور: پنجاب، سندھ، بلوچستان اور خیبرپختونخوا کے ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشنز کے نمائندگان کی ویڈیو لنک اجلاس میں شرکت۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ میں پورے پاکستان کے بہادر ڈاکٹروں کو وباء کے خلاف اُن کی جدوجہد کو سلام پیش کرتا ہوں، طبی عملہ تیزی سے کرونا وائرس کا شکار ہورہا ہے اور حکمرانوں کو کوئی فکر نہیں،عمران خان کی حکومت نے وباء کے دنوں میں جس غفلت کا مظاہرہ کیا ہے، عوام انہیں معاف نہیں کرسکتے،عمران خان کو شرم آنی چاہئیے کہ اپنے اعلان کے باوجود اُنہوں نے ایک بار بھی ڈاکٹرز سے مشاورت نہیں کی،یہ کیسے حکمران ہیں کہ ڈاکٹرز کے بجائے غیرمتعلقہ لوگوں سے پوچھ رہے ہیں کہ وباء سے کیسے نمٹا جائے؟۔بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ عام دنوں اور خصوصی طور پر وباء کے دنوں میں ڈاکٹرز ہمارے فرنٹ لائن کے سپاہی ہیں،وباء کے دنوں میں ہمارے ڈاکٹرز ہماری زندگیوں کے تحفظ کی جدوجہد کررہے ہیں، اس بات کو سمجھنے کی ضرورت ہےکہ ڈاکٹرزمجرم نہیں بلکہ ہمارےمسیحاہیں،اپنی زندگیاں داؤپرلگاکرہماری زندگیاں بچانےوالےڈاکٹرز کو لاوارث چھوڑنا سفاکیت کی انتہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہونا تو یہ چاہئیے تھا کہ وفاقی حکومت کرونا وائرس کے حوالے سے ڈاکٹرز سے مشاورت کرتی مگر انہیں گرفتار کیا گیا، طبی آلات مانگنے پر حکومتوں نے ڈاکٹروں سے مجرموں کی طرح کا سلوک کیا، حکومت اسلام آباد کی شہید ذوالفقار علی بھٹو میڈیکل یونی ورسٹی کو فوری فعال کرے تاکہ وفاقی سطح پر بھی ریسرچ ہو.بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ سندھ میں کورونا وائرس سے صحت یاب ہونے والے مریضوں کی تعداد سب سے زیادہ ہے، ملک کے ایک لاکھ صحت یاب مریضوں میں سندھ کا تناسب 46 فیصد ہے، صوبے میں 46 ہزار824 افراد نے کورونا وائرس کو شکست دی،ینگ ڈاکٹرز کو رسک الاؤنس دینے پر سندھ حکومت کا شکریہ ادا کرتا ہوں, سندھ جلد ڈاکٹروں کی سیکیورٹی کے لئے بھی قانون سازی کرے گا۔

اس سےقبل بلاول بھٹوزرداری نےاپنےٹویٹرپیغام میں کہاکہ پی ٹی آئی کی ایف بی آرمیں ناکامی کی وجہ سےسندھ کو 229 ارب روپے جب کہ پنجاب کو483 ارب روپے کا نقصان ہوا، سندھ ریونیوبورڈ نے اس سال 105 ارب روپے سے زائد کا ریونیو اکٹھا کیا، معیشت کی سست رفتاری اورکورونا وائرس کے باوجود سندھ کے ریونیو میں پانچ فیصد سے زائد کا اضافہ ہوا۔

مزید :

قومی -