ایک طیارہ حادثے کا نوٹس لیتے لیتےحکومت نے تو ۔۔۔تحریک لبیک پاکستان نے بھی وزیر اعظم عمران خان پر چڑھائی کر دی

ایک طیارہ حادثے کا نوٹس لیتے لیتےحکومت نے تو ۔۔۔تحریک لبیک پاکستان نے بھی ...
ایک طیارہ حادثے کا نوٹس لیتے لیتےحکومت نے تو ۔۔۔تحریک لبیک پاکستان نے بھی وزیر اعظم عمران خان پر چڑھائی کر دی

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) تحریک لبیک پاکستان کے ممبر صوبائی اسمبلی سندھ مفتی قاسم فخری نے حکومت کی نااہلی پر سوال اٹھاتےہوئےکہاکہ ہم پرایک ایسانالائق حاکم مسلط کردیا گیاہےجو جس چیز کانوٹس لیتاہےمزید نقصان پہنچا کرہی چھوڑتاہے، چینی پر نوٹس کےبعدچینی 48 سے 90 روپے کلو ہوگئی،آٹے پر نوٹس لیا 20 کلو آٹے کی بوری 650 سے 1200 روپے کی ہوگئی، حالیہ پیٹرول پر نوٹس لیا اور نتیجہ آپ کے سامنے ہے، 75 روپے سے 100 روپے فی لیٹر قیمت ہوچکی ہے،یہی صورتحال پی آئی اے  کی رہی جیسے ہی نوٹس لیا پی آئی اےپر ہی پابندی لگوا دی،صرف ایک حادثہ کا نوٹس لیا اور پوری پی آئی اے تو بند کروا دی ساتھ ہی پاکستان کی ساکھ کو بھی نقصان پہنچایا ہے۔

مفتی قاسم فخری نے کہا کہ پاکستان انٹرنیشل ایئرلائن کے ایک سابق اہلکار کے مطابق وفاقی وزیر برائے ہوا بازی غلام سرور خان کا اپنے ہی ادارے یعنی سول ایوی ایشن پر براہِ راست اور پی آئی اے پر بالواسطہ ’خود کش حملہ‘ ہے جس کے نتیجے میں انھوں نے نہ صرف اپنے پاؤں پر کلہاڑی مار ی ہے بلکہ ساتھ ہی ساتھ پوری صنعت اور ریاست کی ساکھ کو بھی داؤ پر لگا دیا ہے،یہ بات پہلے دن سے مختلف طریقوں سے کہی جا رہی ہے،وفاقی وزیرغلام سرور خان کا پارلیمنٹ میں دیا گیا بیان ہے جس سے انھوں نے اگلی ہی پریس کانفرنس میں بیک ٹریک کیا اور ’جعلی لائسنس‘ سے شروع ہونے والا معاملہ ’مشکوک‘ بن گیا، اس ساری صورتحال کے بارے میں کھل کر بات کرنے کا فیصلہ وزیر اعظم عمران نیازی نے کیا اور انھوں نے وزیرِ ہوابازی کو کہا کہ اس معاملے پر کھل کر بات کی جائے یورپی یونین ایئر سیفٹی ایجنسی نے سوال صرف پی آئی اے پر نہیں بلکہ سول ایوی ایشن اتھارٹی پر اٹھایا ہے،اگر جلد از جلد نااہل حکمرانوں سے نجات نہ حاصل کی گئی تو ممکن ہے کہ پاکستانی اپنی پہچان بھی کھو بیٹھیں گے۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -