نیشنل ایکشن پلان کرایہ داری ایکٹ کے تحت درج مقدمہ خارج کر دیا گیا

نیشنل ایکشن پلان کرایہ داری ایکٹ کے تحت درج مقدمہ خارج کر دیا گیا

  

لاہور(نامہ نگار)نیشنل ایکشن پلان کرایہ داری ایکٹ کے تحت درج مقدمہ میں ملوث دو ملزمان کی ماڈل ٹاؤن کچہری میں پیشی، عدالت نے ملزمان کے وکلاء کے دلائل کے بعد مقدمہ خارج کر دیا،کیوں کہ نہ مالک مکان ،مالک مکان تھا اورنہ کرایہ داری ہی کرایہ دار تھا جبکہ ۔ مسلم ٹاؤن پولیس نے ملزم محمود حسن اور محمد شہباز کو کرایہ داری ایکٹ کی خلاف وزری پر یکم جون کو گرفتار کیا اور مقدمہ درج کرکے جوڈیشل مجسٹریٹ ملک نعیم شوکت کی عدالت میں پیش کیا ملزمان کے وکیل نے اپنے موکلان کے دفاع میں دلائل دیتے ہوئے کہا کہ مسلم ٹاون پولیس نے نیشنل ایکشن پلان کے تحت مقدمات کی زیادہ تعداد ظاہر کرنے کے لئے بوگس مقدمہ قائم کیا ہے تاکہ پولیس کی کارکردگی کو اچھا ثابت کیا جا سکے، وکیل کا کہنا تھا کہ ملزم محمود حسین کو مقدمہ میں مالک مکان ظاہر کیا ہے جبکہ مکان اس کی والدہ کی ملکیت ہے۔

ملزم محمد شہباز کواس کا کرایہ دار ظاہر کیا ہے جبکہ اس کے کرایہ پر رہائشی رکھنے کا کوئی ثبوت مقدمہ کے ساتھ نہیں لگایا۔ پولیس بوگس مقدمات درج کرکے شہریوں کو پریشان کر رہی ہے۔ بے بنیاد مقدمہ کو خارج کیا جائے ملزمان کو رہائی دی جائے جس پرعدالت نے ریکارڈ کا جائزہ لیتے ہوئے ملزمان کو مقدمہ سے خارج کر دیا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -