ایس ایچ اوبادامی باغ پررشوت کاالزام،اہل علاقہ کاتبادلے کامطالبہ

ایس ایچ اوبادامی باغ پررشوت کاالزام،اہل علاقہ کاتبادلے کامطالبہ

  

لاہور ( کامرس رپورٹر)انجمن تاجران جنرل بس اسٹینڈ لاری اڈا و بادامی باغ نے مبینہ طورپر "نذرانہ"لینے کے الزامات اور پو لیس کے اعلی حکام کو تحریری طورپر آگاہ کرنے کے باوجود تعینات رہنے والے ایس ایچ او لاری اڈاکے خلاف بھر پور تحریک چلانے کا اعلان کیا ہے اور کہا ہے کہ 67سالہ بزرگ کو رشوت کی رقم واپس لٹانے کی پاداش میں جھوٹے مقدمہ میں ملوث کر نے سمیت ٹرانسپورٹروں ،ریڑھی بانوں اور تاجروں سے بھتہ لینے والے ایس ایچ رانا شرافت علی اور اس کے کا ر خاص اصغرکو نہ صر ف تبدیل کیا جائے بلکہ گر فتار کر کے اس کے خلاف سنگین دفعات درج کی جائیں ۔واضح رہے کہ انجمن تاجران بادامی باغ کے صدر کی زیر صدارت ہو نے والے اجلاس میں طے پایا ہے کہ جلد ہی ایس ایچ اولاری اڈاکے خلاف سی سی پی او آفس کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا انجمن تاجران بادامی باغ کے صدر شاہد سہیل نے کہا کہ ایس ایچ اولاری اڈا رانا شرافت علی نے جنرل بس اسٹینڈ میں کر پشن کا بازار گر م کر رکھا ہے اور کار خاص پو لیس اہلکار ہر کمزور اور غریب ٹھیلے والوں ، دکانداروں اور ٹرانسپورٹ عملہ سے نذرانہ کا تقاضا کرتے ہیں اور رشوت نہ دینے والے کو ہراساں سمیت جھوٹے مقدمات میں ملو ث کر دیا جاتا ہے جس کی واضح مثال بادامی باغ میں کرایہ پر چارپائی دینے والے بزرگ کو ہراساں کر تے ہوئے ہزارو ں روپے رشوت لی اور بعد ازاں بزرگ شہری پر کرایہ داری ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کروا دیا گیا۔تاہم یو نین نے باقاعدہ تحریری درخواست اور اصل حقائق پو لیس کے اعلی حکام کو دی گئی جس پر کاروائی عمل میں ہو ئی اور بعد ازاں ایس ایچ اونے بزرگ دکاندار کو رشوت کے کچھ پیسے واپس دیتے ہوئے معاملاکو رفع دفع کرنے کے لیے کار خاص کو ذمہ داری سو نپ رکھی ہے ۔انھوں نے کہا کہ پہلی بار ایس ایچ او کا عہدہ حاصل کر نے والے رانا شرافت علی نے جنرل بس اسٹینڈ میں رشوت کا جو بازار گر م کر رکھا ہے اس کے خلاف بھر پور احتجاج کرنے جارہے ہیں ۔ اس حوالے سے ایس ایچ او رانا شرافت علی نے بتایا کہ چار پائی کر ایہ پر دینے والے شخص کے خلاف کاروائی باقاعدہ قانون کے مطابق کی گئی ہے جو بغیر شناختی کارڈ کے لوگوں سونے کے لیے چارپائیاں کر ائے پر دیتا تھا ۔ ایک سوال کے جواب میں ایس ایچ او کا کہنا تھا کہ کوئی شک یا معاملہ کو ختم کر نے کے لیے میں بزرگ دکاندار سے تعاون کو تیار ہوں۔

مزید :

علاقائی -