بدعنوانی کے باعث ملکی بنیادوں کا اسحکام اور ترقی کا اہداف حاصل کرنا ممکن نہیں ، ڈی جی نیب

بدعنوانی کے باعث ملکی بنیادوں کا اسحکام اور ترقی کا اہداف حاصل کرنا ممکن ...

  

 ٌپشاور (پاکستان نیوز) قومی احتساب بیورو خیبر پختونخوا میں تقسیم چیک کی تقریب کا انعقاد کیا گیا ۔ اس موقع پر ڈائریکٹر جنرل نیب شہزاد سلیم نے خیبر پختونخوا کے محکموں ، لوگل گورنمنٹ اینڈ RDD، پی ایچ اے، پبلک ہیلتھ اینڈ انجینئرنگ اور محکمہ زراعت کے بدعنوانی میں ملوث افسران و اہلکاروں سے خرد برد کی گئی 7کروڑ 86لاکھ29ہزار8سو 19روپے رضا کارانہ طور پر وصول کرکے مذکورہ رقم کا چیک ڈپٹی سیکرٹری فنانس خیبر پختونخوا محمد صادق کے حوالے گیا گیا۔شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے ڈائریکٹر جنرل قومی احتساب بیورو نے کہا کہ بدعنوانی کے باعث ملکی بنیادوں کا استحکام اور ترقی کے اہداف حاصل کرنا ممکن نہیں، بدعنوانی اور ترقی کے منازل حاصل کرنے کے دعوؤں کو کبھی ایک ترازو میں تولا نہیں جاسکتا تاہم ملک کو ترقی کی تیز تر راستے پر گامزن کرنے اور ملک کی بنیادوں کو مستحکم کرنے کے لئے معاشرے کے ہر فرد کو کردار ادا کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ بدعنوانی سے پاک پاکستان ہر شہری کا فرض عین ہے۔ اس مشن کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لئے کسی قسم کی کوتاہی نہیں برتی جائیگی۔انہوں نے کہا کہ دنیا کی ترقی یافتہ ممالک کی ترقی کا رازبدعنوانی جیسے ناسور کو جگہ نہ دینا ہے کیونکہ جس معاشرے کو بدعنوانی سے پاک کیا گیا اس معاشرے نے ترقی کی نئی مثالیں قائم کی ہیں۔بدعنوانی کا زہر کسی بھی معاشرے کو تنزلی کی طرف لے جاتا ہے۔ ڈائریکٹر جنرل قومی احتساب بیورو شہزاد سلیم نے کہا کہ کرپشن کیخلاف نیب نے جس مہم کا آغاز کیا ہے اس میں نیب حکام اور اہلکار بڑی بخوبی سے اپنا کردار ادا کر رہی ہے اور جس رفتار سے بدعنوان عناصر سے وصولی کی جارہی ہے اس میں کبھی رکاوٹ نہیں آنے دینگے کیونکہ بدعنوانی ملک کی مستحکم بنیادوں کو کھوکھلا کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑتی تاہم اس ناسور کو ختم کرنے کے لئے سب کو مل کر کردار ادا کرنا ہوگا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -