نواز شریف لاہور کے نہیں پورے ملک کے وزیر اعظم ہیں، سی پیک کے مغربی روٹ پر اعلان کے باوجود عملدرآمد نہ ہونا تشویش ناک ہے:اصغر خان اچکزئی

نواز شریف لاہور کے نہیں پورے ملک کے وزیر اعظم ہیں، سی پیک کے مغربی روٹ پر ...
نواز شریف لاہور کے نہیں پورے ملک کے وزیر اعظم ہیں، سی پیک کے مغربی روٹ پر اعلان کے باوجود عملدرآمد نہ ہونا تشویش ناک ہے:اصغر خان اچکزئی

  

کوئٹہ(مانیٹرنگ ڈیسک)عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر اصغر خان اچکزئی نے کہا ہے کہ وزیر اعظم کی جانب سے سی پیک کے مغربی روٹ سے متعلق واضح اعلان کے باوجود عملدرآمد نہ ہونا تشویش ناک امر ہے،نواز شریف رائیونڈ اور لاہور کے ہی نہیں بلکہ پورے ملک کے وزیر اعظم ہیں اور پورئے ملک کے لئے سوچیں، صوبائی وزراء کی جانب سے اسمبلی فلور پر ایجنسیوں سے متعلق اظہار خیال سے بڑے سوالات نے جنم لیا ہے اُن کے الزامات کی فوری تحقیقات کرائی جائے۔

نجی ٹی وی کے مطابق کوئٹہ پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے اصغر خان اچکزئی کا کہنا تھا کہ وزیر اعظم اپنی بات کرنے کے بعد اْس پر عمل نہیں کرتے جس پر ہمیں تشویش ہے کہ جب اعلیٰ ترین سطح پر بات کرنے کے بعد اس پر عمل نہیں کیا جاتا تو پھرہم کس دروازے پر جائیں اور کس سے انصاف چاہیں؟وزیر اعظم نے آل پارٹیز کانفرنس میں اقتصادی راہداری کے مغربی روٹ پر ترجیحی بنیادوں پر کام کرنے کا اعلان کرتے ہوئے خود کہا تھا کہ اقتصادی راہداری کا صرف ایک ہی روٹ ہے اور وہ مغربی روٹ ہے لیکن اب تک کوئی کام نہیں ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاک فوج جو ہرمشکل میں ملک کو سنبھالتی رہی ہے مگر افسوس کہ اْس نے بھی سی پیک جیسے اہم مسئلے پر وزیر اعظم یا حکومت سے کوئی بات نہیں کی،صوبائی وزراء کی جانب سے ایجنسیوں پر الزامات تشویشناک ہیں ایک جانب تو کہا جاتا ہے کہ سیاسی اور عسکری قیادت ایک پیج پر ہے اور دوسری جانب صوبے میں بد امنی کی ذمہ داری اداروں پر عائد کی جا رہی ہے، ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ الزامات کی باریک بینی سے تحقیقات کرائی جائے ۔اصغر خان اچکزئی کا کہنا تھا کہ صوبے میں اغوا برائے تاوان کے بڑھتے ہوئے واقعات حکومتی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہیں ، صوبائی حکومت بے اختیار ہے تو پھر اقتدار سے الگ کیوں نہیں ہو جاتی ؟

مزید : کوئٹہ