’دوسال کے اندر یہ کام کرلو ورنہ تمہاراکام بند کردیں گے‘

’دوسال کے اندر یہ کام کرلو ورنہ تمہاراکام بند کردیں گے‘
’دوسال کے اندر یہ کام کرلو ورنہ تمہاراکام بند کردیں گے‘

  

جدہ (محمد اکرم اسد/ بیورو چیف) سعودی عرب میں معیار تعلیم کو بلند کرنے کے لئے جامع حکمت عملی تیار کی گئی ہے۔ وزیر تعلیم ڈاکٹر احمد العیسی نے کہا ہے کہ سعودی عرب میں قائم تمام نجی اور غیر ملکی ادارے، سکولز کو لائسنس کا اجراءبند کردیا گیا ہے جنہوں نے رہائشی عمارتوں میں سکولز کھول رکھے ہیں۔ ذرائع کے مطابق وزیر تعلیم نے پرائیویٹ سکولز مالکان کو 2 سال کی مہلت دی ہے کہ وہ اپنی عمارتیں تبدیل کرلیں۔ سکولز کی عمارتوں کے لئے جو قوانین ہیں ان پر عمل کریں۔ جو لوگ یا ادارے قانون کی پابندی نہیں کریں گے مقررہ مہلت کے بعد ان کو لائسنس جاری نہی ں کیا جائے گا۔ لائسنس اجراءکی بنیادی شرط کے مطابق سکولز ایسی عمارتوں میں کھولے جائیں جو خاص طور پر سکول کے لئے ڈیزائن کی گئی ہو جس میں پلے گراﺅنڈ ، لائبریری، لیبارٹری اور حفاظتی تدابیر کو مدنظر رکھا گیا ہو۔ انہوں نے کاہ سکولز کے زمین کے حوصل کے لئے متعلقہ اداروں سے معاملات طے کئے جائیں گے ۔ وزیر تعلیم نے کہا کہ یہ سارے اقدامات سعودی عرب میں معیار تعلیم کو بلند کرنے اور طلبا کو بہتر تعلیمی ماحول فراہم کرنا ہے۔ وزارت تعلیم کی طرف سعودی عرب میں نجی تعلیمی اداروں کے لئے ایک حکمت عملی طے کی جارہی ہے، سرمایہ کاری کے لئے مخصوص مراکز کا قیام بھی شامل ہے۔اس کے علاوہ ون ونڈو آپریشن بھی متعارف کروایا جائے گا جہاں تعلیم میں سرمایہ کاری کرنے والوں کا ایک جگہ تمام سہولیات میسر ہوں گی۔

مزید :

عرب دنیا -