پھلوں کے بائیکاٹ کے دوسرے روز ہی فروٹ کے کاروبار میں 50فیصد کمی واقع ہو گئی ،پھلوں کی قیمتوں میں تاحال کوئی کمی نہیں ہوئی

پھلوں کے بائیکاٹ کے دوسرے روز ہی فروٹ کے کاروبار میں 50فیصد کمی واقع ہو گئی ...
پھلوں کے بائیکاٹ کے دوسرے روز ہی فروٹ کے کاروبار میں 50فیصد کمی واقع ہو گئی ،پھلوں کی قیمتوں میں تاحال کوئی کمی نہیں ہوئی

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن ) مہنگائی کے باعث پھلوں کے بائیکاٹ کے حوالے سے کراچی سے شروع ہونے والی مہم نے ریڑھی بانوں اور دوکانداروں کو پریشان کر دیا جن کا کہنا ہے کہ تین روزہ مہم کے دوسرے روز ہی انکے کاروبار میں 50فیصد تک کمی واقع ہو چکی ہے ۔ڈیلی پاکستان کے سروے کے مطابق سوشل میڈ یا پر جاری پھلوں کے بائیکاٹ کی مہم کے حوالے سے دکانداروں کا کہنا ہے کہ تین روزہ مہم کے دوسرے روز ہی ان کے کاروبار میں 50فیصد تک کمی ہو چکی ہے,تاحال پھلوں کی قیمتوں میں کوئی کمی واقع نہیں ہوئی ۔لاہور کی فروٹ منڈی کے پھل فروش کا کہنا تھا کہ پہلے روزے ہماری سیل 20ہزار تھی مگر اگلے روز کم ہو کر 8ہزار تک پہنچ گئی اور ہم سے اب کوئی بھی پھل نہیں خرید رہا ۔ان کا کہنا تھا کہ ہماری سیل میں واضح کمی کا ذمہ دار حکومت ہے ،احتجاج ہمارے خلاف نہیں بلکہ منڈی والوں اور آڑہتیوں کے خلاف ہونا چاہیے جو ذخیرہ اندوزی کر کے ہمیں مہنگے داموں پھل بیچتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ پھلوں کی بائیکاٹ مہم سے ہمارا معاشی قتل ہو رہا ہے ،ہمارے خلاف غلط مہم چلائی جا رہی ہے ۔پھل فروشوں کا کہنا تھا کہ ہم مہنگا فروٹ نہیں بیچتے بلکہ دکانوں والے مہنگے داموں فروٹ بیچتے ہیں۔

مزید خبریں :”پلیز، میری یہ تصویریں ڈیلیٹ کر دو۔۔۔“ فوٹوگرافرز نے ہوٹل میں کترینہ کیف کی ایسی حالت میں تصاو یر اتار لیں کہ اداکارہ کو عزت بچانے کے لالے پڑ گئے، فوراً منتیں شروع کر دیں

مزید : لاہور