برازیلین فٹبالر نیمار نے بد اخلاقی کے الزامات مسترد کر دئیے

برازیلین فٹبالر نیمار نے بد اخلاقی کے الزامات مسترد کر دئیے

  



پیرس (آئی این پی)فرانس کے دارالحکومت پیرس میں ایک خاتون نے برازیل کے سٹار فٹبالر نیمار پر جنسی حملے کا الزام عائد کیا ہے جس کی انھوں نے سختی سے اس کی تردید کی ہے۔ایک بیان میں نیمار کا کہنا تھا میں پیرس میں ایک خاتون کو ریپ کرنے کے الزام کی سختی سے تردید کرتا ہوں۔نیمار سے وابسطہ مینجمنٹ کے افراد نے ایک بیان میں کہا ہے کہ فٹ بالر ان الزامات سے مکمل طور پر لاتعلقی کا اظہار کرتے ہیں۔واضح رہے کہ برازیل کے شہر سا پالو میں دائر کی جانے والی پولیس رپورٹ میں خاتون نے الزام عائد کیا ہے کہ ان پر حملہ فرانس کے ایک ہوٹل میں ہوا جہاں نیمار پیرس سینٹ جرمین کے لیے کھیلتے ہیں۔نیمار نے ان الزامات کو مسترد کیا ہے۔ ایک بیان میں انھوں نے کہا ہے کہ خاتون کی نمائندگی کرنے والے وکیل کی جانب سے وہ تاوان کی کوششوں کے شکار ہوئے ہیں۔پولیس دستاویزات کے مطابق خاتون کی نیمار سے انسٹاگرام پر جان پہچان ہوئی اور انھوں نے خاتون سے پیرس میں ملنے کی خواہش ظاہر کی۔ دستاویز میں خاتون کا نام ظاہر نہیں کیا گیا ہے۔نیمار نے خاتون کو برازیل سے فرانس کے لیے ہوائی ٹکٹ فراہم کیا اور انھیں سوفیٹل پیرس آر دو ٹریومفے نامی ہوٹل میں ٹھہرانے کا انتظام کروایا۔خاتون نے الزام عائد کیا ہے کہ مئی 15کو جب نیمار ہوٹل آئے تو انھوں نے 'بظاہر شراب پی رکھی تھی۔پولیس دستاویز میں کہا گیا ہے کہ بات چیت اور بغل گیر ہونے کے بعدایک مقام پر نیمار جارح ہو گئے اور انھوں نے تشدد کرتے ہوئے، خاتون کی مرضی کے خلاف ان کے ساتھ جنسی فعل کیا۔

نیمار نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ وہ خاتون کی جانب سے لگائے جانے والے تمام الزامات کو پوری طرح سے مسترد کرتے ہیں۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی