وزیراعظم عمران خان وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کیساتھ ہاتھ کرگئے، انہیں جہاز میں بیٹھنے سے ہی روک دیا گیا

وزیراعظم عمران خان وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کیساتھ ہاتھ کرگئے، انہیں جہاز ...
وزیراعظم عمران خان وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کیساتھ ہاتھ کرگئے، انہیں جہاز میں بیٹھنے سے ہی روک دیا گیا

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) سینئر صحافی نے دعویٰ کیا ہے کہ سعودی عرب کے دورہ کے موقع پر وزیراعظم عمران خان نے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کو پیچھے چھوڑدیااور وزیراعظم کے خصوصی طیارے میں جگہ کی کمی کے باعث سوار ہونے سے روکدیاگیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان گزشتہ ہفتے مکہ میں ہونیوالے اوآئی سی کے اجلاس میں شرکت کیلئے گئے اور مبینہ طورپر شاہ محمود قریشی کو اکیلا چھوڑگئے۔سینئر صحافی اعزاز سید کے مطابق ”سعودی عرب او آئی سی کانفرنس میں شرکت کے لیے روانگی کے موقع پر وزیر خارجہ شاہ محمود کو جگہ کی کمی کاکہہ کر وزیراعظم کے طیارے میں لیجانے سے انکار کردیا گیا، وزیر خارجہ کو متبادل بندوبست کرنا پڑا“۔

اس ضمن میں سرکاری ذرائع سے تصدیق نہیں ہوسکی تاہم ’دی کرنٹ‘ کوذرائع نے بتایاکہ شاہ محمود قریشی کو آف لوڈ نہیں کیاگیا لیکن بروقت ہی آگاہ کردیاگیا تھاکہ وزیراعظم کے طیارے میں جگہ نہیں ہوگی ،آپ اپنا انتظام کرلیں۔یادرہے کہ اوآئی سی کی رکن ریاستوں کے سربراہان کے سیشن سے قبل وزرائے خارجہ کی سطح کی میٹنگز کا انعقاد کیاگیا تھا جس میں مکہ میموسے متعلق معاملات کو حتمی شکل دی گئی جو کانفرنس میں پیش ہونے کے بعد منظور کرلیاگیا، ریاست میں بروقت پہنچ کر شاہ محمود قریشی نے پاکستان کی نمائندگی کی ۔

یادرہے کہ اوآئی سی سمٹ ہرتین سال بعد ہوتا ہے اور مسلمان ممالک کے اہم فیصلے کیے جاتے ہیں، اس سال بھی مسلمان ممالک کو درپیش مسائل کانفرنس کاموضوع تھے۔

مزید : قومی


loading...