10 سال سے مشکلات کا شکار ہیں،ظاہر شاہ

10 سال سے مشکلات کا شکار ہیں،ظاہر شاہ

  

بونیر(ڈسٹرکٹ رپورٹر)عوامی ورکرز پارٹی یونین کونسل گدیزی کے جنرل سیکرٹری ظاہرشاہ ملنگ کے رہایش گاہ غنڈہ کے میں دہشت گردی سے متاثرہ علاقوں ایلم کلے۔بکرو۔سرہ خپہ۔کوک بانڈہ اور دیگر علاقوں کے مکنیوں سخی جان۔حکیم۔عمرداد اور دیگر نے کہاکہ ہم گذشتہ دس سالوں سے بہت سے مشکلات سے دوچار ہے۔حکومتی ادارے شک کی بنیاد ہمارے نوجوانوں پر تشددکرکے انہیں گھروں سے اٹھارہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہم محب وطن پاکستانی ہے۔اور ہمیں بھی اس ملک میں رہناہے۔مگر حکومتی ادارے ہمیں بے جاتنگ کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ اگر ہم میں کوئی بھی حکومت کے خلاف منفی سرگرمیوں میں ملوث ہو تو بے شک انہیں کیفرکردار تک پہنچائے۔مگر بے گناہ لوگوں کو تنگ نہ کرے۔ان پہاڑوں میں ہمارا گزر مویشی پالنے اور انہیں فروحت کرنے پر ہے۔مگر ان اداروں نے ہماری مویشیوں کو بند کرنے کے ساتھ ساتھ ہمارے گھروں سے نکلنے پر بھی پابندیاں لگائی ہے۔جس کی وجہ سے ان علاقوں میں ہمارا رہنا دشوار ہو گیاہے۔انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ ہمیں جینے کا حق دیا جائے۔اس موقع پر عوامی ورکرز پارٹی کے رہنماء ظاہر شاہ ملنگ نے کہا کہ ریاست پاکستان نے ہمیں قومی شناحت دے دی ہے۔اور ہمارے ساتھ قومی شناحتی کارڈ بھی ہے۔ہم پیربابا بازار تک جانے کے لئے سات کلومیٹر کا فاصلہ کئی چیک پوسٹوں پر ہماری جامہ تلاشی لے جارہی ہے۔اور ہم پر شک کیاجاتاہے۔انہوں نے کہا کہ ان اداروں کی وجہ سے ہماری زندگی اجیرن ہوچکی ہے۔انہوں نے چیف جسٹس اف پاکستان سے مطالبہ کیا کہ ہمارے لوگوں کو جینے کا حق دیا جائے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -