ساری عدالتوں کے فیصلے راشدہ یعقوب کےخلاف ہیں ،نااہلی کے بعد دوبارہ اجازت ملنا ناممکنات میں سے ہے ،سپریم کورٹ کے سابق رکن اسمبلی راشدہ اور شیخ یعقوب نااہلی کیس میں ریمارکس

ساری عدالتوں کے فیصلے راشدہ یعقوب کےخلاف ہیں ،نااہلی کے بعد دوبارہ اجازت ...
ساری عدالتوں کے فیصلے راشدہ یعقوب کےخلاف ہیں ،نااہلی کے بعد دوبارہ اجازت ملنا ناممکنات میں سے ہے ،سپریم کورٹ کے سابق رکن اسمبلی راشدہ اور شیخ یعقوب نااہلی کیس میں ریمارکس

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ نے سابق رکن اسمبلی راشدہ اور شیخ یعقوب کی نااہلی کیس میںمخالف فریق کو وکیل کرنے کے لیے مہلت دے دی۔جسٹس عمر عطابندیال نے کہاکہ ساری عدالتوں کے فیصلے راشدہ یعقوب کےخلاف ہیں ،راشدہ یعقوب کے حوالے سے تو سپریم کورٹ تک نااہلی ہو چکی ہے، ایک راوَنڈ میں نااہلی ہونے کے بعد دوبارہ مقدمہ بازی کیسے ہو سکتی ہے؟ ۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں سابق رکن اسمبلی راشدہ اور شیخ یعقوب کی نااہلی کیس کی سماعت ہوئی،جسٹس عمر عطابندیال نے کہاکہ ساری عدالتوں کے فیصلے راشدہ یعقوب کےخلاف ہیں ،راشدہ یعقوب کے حوالے سے تو سپریم کورٹ تک نااہلی ہو چکی ہے، ایک راوَنڈ میں نااہلی ہونے کے بعد دوبارہ مقدمہ بازی کیسے ہو سکتی ہے؟ ۔وکیل نے کہاکہ سپریم کورٹ نے قانون کے مطابق الیکشن لڑنے کی آ بزویشن دی تھی،جسٹس قاضی محمد امین نے کہاکہ کیا قرضے واپس کئے؟ سیدھاسوال کا سیدھا جواب دیں،وکیل نے کہاکہ 4 میں سے 3 بینکوں کے قرضے واپس کئے ،ایک بینک نے قرضہ معاف کردیاتھا،جسٹس قاضی محمد امین نے کہاکہ سپریم کورٹ تک نااہلی کے بعد دوبارہ اجازت ملنا ناممکنات میں سے ہے ،مخالف فریق نے کہاکہ ہمیں وکیل کرنے کی اجازت دی جائے،عدالت نے مخالف فریق کو وکیل کرنے کے لیے مہلت دیتے ہوئے سماعت غیر معینہ مدت تک ملتوی کردی۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -