نامور فنکارہ بشریٰ انصاری پاکستان واپس کیوں نہیں آنا چاہتیں؟ ویڈیو پیغام میں خود ہی بتادیا

نامور فنکارہ بشریٰ انصاری پاکستان واپس کیوں نہیں آنا چاہتیں؟ ویڈیو پیغام ...
نامور فنکارہ بشریٰ انصاری پاکستان واپس کیوں نہیں آنا چاہتیں؟ ویڈیو پیغام میں خود ہی بتادیا

  

ٹورنٹو(ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کی نامور فنکارہ بشریٰ انصاری نے پاکستانیوں کی غیر سنجیدگی کی وجہ سے وطن واپس آنے سے انکار کردیا ہے۔ بشریٰ انصاری ملک میں کورونا وائرس کے پھیلاو کے آغاز میں کینیڈا چلی گئی تھیں۔

وہ بعد میں لاک ڈاون کی وجہ سے وہاں پھنس کر رہ گئیں تاہم اب ان کا کہنا ہے کہ جب تک پاکستانی اس وبا کے حوالے سے سنجیدہ نہیں ہوتے وہ وطن واپس نہیں آئیں گی۔

مختصر ویڈیو پیغام میں بشریٰ کا کہنا ہے کہ یہاں (کینیڈا میں) چاہے جتنی بھی خوبصورتی ہو لیکن اپنے ملک کی یاد ہر وقت آتی ہے، دیار غیر میں کچھ بھی اچھا نہیں لگتا اور  وہ وہاں مجبوری کی حالت میں ہیں تاہم انہوں نے اپنے مخصوص انداز میں یہ بھی کہا کہ  انہیں کچھ لوگ کہہ رہے ہیں کہ پاکستان مت جاؤ، وہاں کوئی بھی وبا کو سنجیدہ نہیں لے رہا اور وہ بھی تب تک وطن نہیں آئیں گی جب تک قوم کورونا کو سنجیدہ نہیں لیتی۔

64 سالہ اداکارہ نے کہا "آپ لوگ صورتحال کی سنگینی کو نہیں سمجھ رہے اور اس کو مذاق سمجھ رہے ہیں اسی لیے یہ وائرس تیزی سے پھیل رہاہے۔

خیال رہے کہ پاکستان میں مارچ کے وسط سے لاک ڈاؤن کو نرم کردیا گیا تھا، جس کے بعد اب ملک بھر میں جزوی طور پر معمولات زندگی بحال ہو چکی ہیں، جب کہ 2 جون کو سندھ کی حکومت نے شہروں کے اندر ٹرانسپورٹ چلانے کی بھی اجازت دی تھی۔

لاک ڈاؤن کو نرم کیے جانے کے بعد ملک میں کورونا کے کیسز میں اضافہ دیکھا جا رہا ہے اور 2 جون کو ریکارڈ 4 ہزار تک نئے کیسز سامنے آئے تھے اور 40 سے زائد اموات ہوئی تھیں۔

ملک میں تین جون کی صبح تک کورونا کے مریضوں کی تعداد بڑھ کر 78 ہزار 824 تک جا پہنچی تھی جب کہ اموات کی تعداد 1658 تک جا پہنچی تھی۔

کورونا کے سب سے زیادہ کیس 31 ہزار 83 کیس صوبہ سندھ میں تھے جب کہ پنجاب میں کورونا کے مریضوں کی تعداد بھی بڑھ کر 27 ہزار 850 تک جا پہنچی تھی۔

مزید :

تفریح -