تحریک انصاف نے پارٹی الیکشن کرائے، ممکنہ نااہلی حیران کن ہے، شہری

تحریک انصاف نے پارٹی الیکشن کرائے، ممکنہ نااہلی حیران کن ہے، شہری
تحریک انصاف نے پارٹی الیکشن کرائے، ممکنہ نااہلی حیران کن ہے، شہری

لاہور (محمد نواز سنگرا/الیکشن سیل) تحریک انصاف نے اچھے طریقے سے الیکشن کرائے ہیں ایسا ملکی تاریخ میں پہلی دفعہ ہوا ہے جبکہ باقی پارٹیاں گھر بیٹھ کر عہدے داروں کا اعلان کرتی ہیں۔ شہریوں نے الیکشن کمیشن کی طرف سے تحریک انصاف کی آئندہ انتخابات کیلئے ممکنہ نااہلی پر کہا کہ الیکشن کمیشن نے ایسا جان بوجھ کر کیا ہے جبکہ کچھ کاکہنا تھا کہ الیکشن کمیشن بہتر جانتا ہے ہم کچھ نہیں کہہ سکتے۔ ”روزنامہ پاکستان“ کی طرف سے کئے گئے سروے میں شہریوں کی اکثریت نے کہا کہ تحریک انصاف نے قوائد وضوابط کی رو میں الیکشن کروا کے تاریخ رقم کردی ہے جس کا پارٹی کے اندر انتشار، لڑائی جھگڑوں جیسے واقعات کی صورت میںاسے بہت سارا نقصان بھی اٹھانا پڑا جبکہ الیکشن کمیشن کی طرف سے ممکنہ نااہلی حیران کن ہے۔ خرم، محمد طیب اور اسلم نے بتایا کہ تحریک انصاف نے جس طرح کھلم کھلے انٹرا پارٹی انتخابات کرائے ہیں اس کی مثال نہیں ملتی۔ انہوں نے کہا کہ باقی پارٹیوں کے سربراہ گھر بیٹھ کر عہدے داروں کا اعلان کردیتے ہیں جبکہ اپنی مرضی سے لوگوں کو عہدے تقسیم کرتے ہیں۔ جبکہ عمران خان نے ون ٹو ون پولنگ کرائی، ووٹ کاسٹنگ ہوئی اور باقاعدہ طور پر تحصیل، ٹاﺅن، ضلع اور صوبے لیول پر عہدے داروں کا چناﺅ کیا گیا۔ مشتاق اور انور نے کہا کہ انٹرا پارٹی الیکشن کی صورت میں تحریک انصاف نے بہت سے نقصانات اٹھائے ہیں انتخابات پر اخراجات بھی ہوئے۔ لڑائیاں، جھگڑے، خلشیں، دوریاں اور پارٹی کے اندر دراڑ بھی پڑی اب دیکھتے ہیں کہ عمران خان اس خلا کو کیسے پر کرتے ہیں جبکہ اتنے سارے نقصانات کے باوجود الیکشن کمیشن کی طرف سے نااہلی حیران کن ہے اور یہ سب کچھ الیکشن کمیشن نے جان بوجھ کر کیا ہے ہم تو سمجھ رہے تھے کہ الیکشن کمیشن تحریک انصاف کو سرپرائز دے گا۔ عدنان اور عبدالرحیم نے کہا کہ الیکشن کمیشن بااختیار ہے اور بہتر جانتا ہے ہم اندرونی معاملات کو نہیںجانتے الیکشن کمیشن نے جو کہا اچھا ہی ہوگا۔

مزید : الیکشن ۲۰۱۳

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...