فلپائن ، سعودی عالم دین ڈاکٹرعائض القرنی پر دہشت گردوں کا حملہ،شدید زخمی ، 2محافظ جاں بحق

فلپائن ، سعودی عالم دین ڈاکٹرعائض القرنی پر دہشت گردوں کا حملہ،شدید زخمی ، ...

  

منیلا( آن لائن )سعودی عرب کے نامور اور متنازع اسلامی اسکالر ڈاکٹر الشیخ عائض بن عبداللہ القرنی فلپائن میں فائرنگ کے ایک واقعے میں زخمی ہو گئے ہیں جبکہ ان کے دو ساتھیوں کے ہلاک ہونے کی اطلاعات ہیں۔غیر ملکی میڈیاکے مطابق فائرنگ کا واقعہ اس وقت پیش آیا جب وہ زانبوآنگا شہر میں لیکچر دے کر فارغ ہوئے تھے کہ نامعلوم حملہ آوروں نے ان پر حملہ کر دیا۔

۔ڈاکٹر عائض القرنی کو شدید زخمی حالت میں ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔الشیخ عائض نے اپنے ٹویٹر اکاونٹ پر حادثے سے چند لمحے قبل پیغام دیا تھا کہ کسی سے اس کے درجہ ایمان کے بارے میں سوال نہ کیا جائے۔

خود سے پوچھا جائے کہ تم نماز ، ذکر، قرآن کی صحبت کا کتنا اہتمام کرتے ہو۔ نیز اپنی زبان اور دل کے حفاظت کتنی کرتے ہو۔حادثے سے سات گھنٹے قبل ڈاکٹر عائض بن عبداللہ القرنی نے ٹویٹر پر ایک اور پیغام میں لکھا تھا کہ اگر اللہ آپ کو مزید ایک دن زندگی بخشے تو اس نعمت پر شکر ادا کریں اور سارے دن کو اس کی اطاعت میں گزاریں۔الشیخ عائض القرنی سعودی عالم دین مملکت کی جنوبی گورنری بلقرن کے آل شریح گاؤں میں پیدا ہوئے۔ آپ حدیث نبوی میں ڈاکٹریٹ کی ڈگری کے علاوہ متعدد کتابوں کے مصنف اور مبلغ ہیں ۔

مزید :

عالمی منظر -