روس کا مشرقی وسطیٰ میں کیمیائی حملوں کا انتباہ

روس کا مشرقی وسطیٰ میں کیمیائی حملوں کا انتباہ

  

جنیوا(آن لائن)روس نے خبردار کیا ہے کہ مشرق وسطیٰ میں سرگرم دہشت گرد گروپ ’’داعش‘‘ اور دوسری انتہا پسند تنظیمیں اپنے مقاصد کے لیے کیمیائی ہتھیار استعمال کرسکتی ہیں۔ غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق جنیوا میں کیمیائی اور جوہری ہتھیاروں کی کمی سے متعلق منعقدہ عالمی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے روسی وزیرخارجہ سرگئی لاروف نے داعش کو دور حاضر کا بدترین خطرہ قرار دیتے ہوئے اس سے نمٹنے کے لیے نئے عالمی معاہدے کی ضرورت پر زور دیا۔انہوں نے کہا کہ حالیہ عرصے میں سامنے آنے والی تحقیقات سے یہ پتا چلا ہے کہ داعش اور دوسرے دہشت گرد گروپ نہ صرف زہریلا اسلحہ تیار کررہے ہیں بلکہ انہوں نے شام اورعراق میں ان ہتھیاروں کواستعمال بھی کیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ شام اور عراق میں دہشت گردوں کے جرائم کی مثالیں اب یمن اورلیبیا میں بھی دیکھنے کو مل رہیں جو نہایت خطرناک رحجان ہے۔

مزید :

عالمی منظر -