کمپنی کی طویل ترین پرواز،ایمریٹس ایئرلائن کاطیارہ دبئی سے آکلینڈ پہنچ گیا

کمپنی کی طویل ترین پرواز،ایمریٹس ایئرلائن کاطیارہ دبئی سے آکلینڈ پہنچ گیا
کمپنی کی طویل ترین پرواز،ایمریٹس ایئرلائن کاطیارہ دبئی سے آکلینڈ پہنچ گیا

  

دبئی سٹی (مانیٹرنگ ڈیسک) دبئی کی ایمریٹس ایئرلائن کے ایک مسافر طیارے اے 380 جیٹ نے بغیر کسی وقفے کے اب تک کی طویل ترین مسافت کی پرواز کا کمپنی کا نیا ریکارڈ قائم کردیاہے اور دبئی سے6 1گھنٹے 24 منٹ مسلسل فضاءمیں رہنے کے بعدنیوزی لینڈ کے شہر آکلینڈپہنچ گیا، دونوں شہروں کے درمیان طیارے نے 14,200 کلو میٹر کا سفر طے کیا۔یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ یہ ریکارڈ ایمریٹس ایئرلائن کا اپنا ہے جبکہ دنیا میںطویل ترین پرواز سنگاپور کی ایئرلائن کی تھی جو سنگاپورسے نیوجرسی کے درمیان پروازکرتی تھی اور اسے سفر مکمل کرنے میں 19گھنٹے لگتے تھے جو سب سے طویل دورانیے کی پرواز تھی ۔

کیوی میڈیا کے مطابق اندازہ لگایا گیا تھا کہ دبئی سے آکلینڈ کے درمیان سفر کے لیے ایمریٹس ایئرلائن کے طیارے کو17 گھنٹے 15 منٹ کا وقت لگے گا لیکن یہ مسافت وقت سے پہلے ہی پوری ہوگئی۔اس وقت طویل ترین فلائٹ 16 گھنٹے 55 منٹ تک پرواز کرتی ہے اور سڈنی فلائیٹ اس دوران صرف 13،800 کلو میٹر تک کی مسافت طے کرتی ہے لیکن ایمریٹس ایئرلائن اس ریکارڈ کو بھی توڑنے کے لیے پر عزم ہے۔

اطلاعات کے مطابق اس نئے روٹ کے افتتاح کے لیے اے 380 مسافر طیارے کا استعمال کیا گیا لیکن کہا جا رہا ہے کہ کمپنی عام طور پر اس روٹ کے لیے بوئنگ 777 کا استعمال کرے گی۔ کمپنی اسی ماہ دبئی سے پاناما شہر تک ایک فلائٹ شروع کرنے کا منصوبہ بنا رہی ہے جس کا دورانیہ 17 گھنٹے 35 منٹ تک ہوگا۔

مزید :

بزنس -