وہ ملک جہاں کی نوجوان لڑکیاں جنسی غلام بنا کر پاکستان لائی جارہی ہیں،یہ دھند ہ کون کر رہا ہے؟ ایسا انکشاف کہ سب دنگ رہ گئے

وہ ملک جہاں کی نوجوان لڑکیاں جنسی غلام بنا کر پاکستان لائی جارہی ہیں،یہ دھند ...
وہ ملک جہاں کی نوجوان لڑکیاں جنسی غلام بنا کر پاکستان لائی جارہی ہیں،یہ دھند ہ کون کر رہا ہے؟ ایسا انکشاف کہ سب دنگ رہ گئے

  

بغداد(مانیٹرنگ ڈیسک) عراق میں داعش کی طرف سے یزیدی خواتین کو جنسی غلام بنانے کی خبریں تو آتی رہتی ہیں لیکن اب ایسا انکشاف ہوا ہے جس نے دنیا کو حیرت زدہ کر دیا ہے۔ برطانوی اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ داعش نے ایک بین الاقوامی جنسی ونگ قائم کر رکھا ہے اور عراق سے اغواءکی گئی خواتین کو بطور جنسی غلام پاکستان ، افغانستان، لیبیا اور چیچنیا بھیج رہی ہے۔ داعش نے 2014ءمیں عراق کے مختلف قصبوں سے سینکڑوں خواتین کو غلام بنایا تھا۔ انہی قصبوں میں ”شینگال“ بھی شامل تھا۔ شینگال کے میئر میہیما جلیل(Mihemma Xelil) کا کہنا ہے کہ ”فی الحال ہم یہ نہیں جانتے کہ ہمارے علاقے سے اغواءکی گئی خواتین کو کیسے عراق اور شام سے دیگر ممالک میں بھیجا گیا لیکن اس بات کی تصدیق ہو چکی ہے کہ ہماری اغواءکی گئی خواتین میں سے بعض کو دیگر ممالک منتقل کر دیا گیا ہے۔“

مزید جانئے: ”ہم نے ایسا میزائل تیار کر لیا جو۔۔۔“شمالی کوریا نے ایسا ہتھیار تیار کرنے کا دعویٰ کر دیا کہ دنیاکے ہوش اُڑا دیئے، یقین کرنا مشکل ہو گیا

رپورٹ کے مطابق داعش کے قبضے سے فرار ہو کر آنے والی خواتین نے بھی بتایا ہے کہ ”اغواءکی گئی خواتین اور لڑکیوں میں سے جو بہت زیادہ خوبصورت تھیں ان کی بولی لگانے کے لیے انہیں داعش کے گڑھ رقہ پہنچایا گیا تھا۔ وہاں انہیں برہنہ کرکے ان کی بولی لگائی گئی اورجو خریدار کسی خاتون کی سب سے زیادہ بولی لگاتا وہ اس کے ہاتھ فروخت کر دی جاتی۔“ شینگال کے میئر نے مزید بتایا کہ ”اب بھی اغواءہونے والی کئی خواتین فون کے ذریعے اپنے خاندانوں سے رابطے میں ہیں اور انہیں تاوان کی رقم ادا کرنے آزاد کروانے کی درخواست کرتی رہتی ہیں۔“ رپورٹ کے مطابق شینگال کے رہائشی زودیدا میستو نامی 75سالہ شخص کی بیوی اور تین بیٹیاں بھی 2014ءمیں اغواءکی گئی تھیں۔ میستو نے اس کے بعد تاحال اپنی بیوی اور بیٹیوں کو نہیں دیکھا۔ میستو کا کہنا تھا کہ ”داعش کے شدت پسندوں نے میری بڑی بیٹی کے عوض 15ہزار ڈالر(تقریباً15لاکھ روپے) تاوان مانگا تھا لیکن میرے پاس صرف 5ہزار ڈالر ہیں۔ باقی رقم کا میں انتظام نہیں کر سکا۔

مزید :

عرب دنیا -