’تم نے ہم سے پوچھا بھی نہیں‘ پاکستان کا وہ اقدام جو چین کو بالکل بھی پسند نہیں آیا

’تم نے ہم سے پوچھا بھی نہیں‘ پاکستان کا وہ اقدام جو چین کو بالکل بھی پسند ...
’تم نے ہم سے پوچھا بھی نہیں‘ پاکستان کا وہ اقدام جو چین کو بالکل بھی پسند نہیں آیا

  

بیجنگ (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان اور چین کے تعلقات ہر دور میں انتہائی مضبوط اور قابل رشک رہے ہیں، لیکن گزشتہ ماہ پیش آنے والے ایک واقعے کے بعد ان تعلقات کے بارے میں کچھ خدشات کا اظہار کیا جا رہا ہے ۔ گزشتہ ماہ کی 13 تاریخ کو امریکی حکومت کی طرف سے پاکستان کو 8 عدد F16 طیاروں کی فروخت کے متعلق اہم فیصلہ سامنے آیا۔ نیوز سائٹ Medium.comکی ایک رپورٹ کے مطابق پاکستان اور امریکا کے درمیان ان طیاروں کی فروخت کا معاملہ ہی وہ اہم واقعہ ہے کہ جو دونوں ممالک کے مضبوط تعلقات میں فرق لانے کا باعث بن سکتا ہے۔

مزید جانئے: پاکستانی گروہ، انسانی اسمگلنگ کے جرم میں گرفتار

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ پاکستان نے چین کے J-N/FC-20جنگی طیاروں کی بجائے امریکا کے F16 طیاروں کو ترجیح دی ہے، اور یہ کہ چین کو پاکستان کا یہ اقدام بالکل پسند نہیں آیا۔ رپورٹ کے مطابق بیرونی دنیا چینی پالیسی سازوں کی سوچ کا اندازہ چین کے سرکاری میڈیا میں شائع ہونے والی تحریروں سے کرتے ہیں۔ ایک ایسے ہی مضمون کا حوالہ دیا گیا ہے، جس میں چینی حکومت سے کہا گیا ہے کہ ممالک کے درمیان تعلقات باہمی مفاد پر مبنی ہوتے ہیں اور حکومت کی توجہ اس بات کی طرف دلائی گئی ہے کہ اگر پاکستان کو چینی مفادات کا خیال نہیں تو چین کو بھی اس کی مدد اور حمایت کے لئے اپنی توانائیاں صرف نہیں کرنا چاہئیں۔

رپورٹ میں اس رائے کا بھی اظہار کیا گیا ہے کہ امریکا سے F16 طیاروں کی خریداری کے علاوہ چین کا بھارت کے ساتھ بڑھتا ہوا تعاون اور خطے کے بدلتے ہوئے معاشی اور سیاسی حالات بھی پاکستان اور چین کے تاریخی طور پر انتہائی مضبوط تعلق میں نئی تبدیلیوں کا سبب بن سکتے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -