بھارتی جیل سے مجاہدین کے حملے میں رہا ہونے والے مشہور جہادی کمانڈر ابو حنظلہ کی ایک ماہ بعد ایسی ویڈیو منظر عام پر آ گئی کہ پورے ہندوستان کو سانپ سونگھ گیا

بھارتی جیل سے مجاہدین کے حملے میں رہا ہونے والے مشہور جہادی کمانڈر ابو حنظلہ ...
بھارتی جیل سے مجاہدین کے حملے میں رہا ہونے والے مشہور جہادی کمانڈر ابو حنظلہ کی ایک ماہ بعد ایسی ویڈیو منظر عام پر آ گئی کہ پورے ہندوستان کو سانپ سونگھ گیا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن)مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کے ساتھ آزادی کشمیر کی جنگ لڑنے والی معروف جہادی تنظیم لشکر طیبہ کے گذشتہ ماہ 5فروری کو پولیس حراست سے فرارہونے والے معروف کمانڈر نوید جٹ عرف ابو حنظلہ کی ایک ایسی ویڈیو سامنے آئی ہے جس نے بھارتی سرکار کے ہوش اڑا کر رکھ دیئے ہیں ۔

بھارتی نجی ٹی وی چینل ’’ این ڈی ٹی وی ‘‘ کے مطابق 5فروری 2018ء کو مقبوضہ کشمیر کے دارالحکومت سری نگر کے مہاراجہ ہری سنگھ ہسپتال پر جیل سے آنے والی گاڑی پر مجاہدین نے ہلہ بول کر اپنے قیدی نوید جٹ عرف ابو حنظلہ کو بحفاظت چھڑا کر لے گئے تھے ،مجاہدین کے اس حملے میں بھارتی فورسز کے دو اہلکار ہلاک جبکہ کئی زخمی ہو گئے تھے ،نوید جٹ عر ف ابو حنظلہ کی رہائی کے نتیجے میں مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کو شدید جھٹکا لگا تھا اور انہوں نے جگہ جگہ چھاپے مارے تاہم نوید جٹ کا کہیں سراغ نہ لگ سکا تھا ، بھارتی فورسز کے ہاتھوں با آسانی رہائی حاصل کرنے والے نوید جٹ کی ایک ماہ بعد ایسی ویڈیو منظر عام پر آئی ہے جس نے ہندو فوج کے اوسان ہی خطا کر دیئے ہیں ،ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ نوید جٹ ہاتھوں میں جدید آٹو میٹک رائفل تھامے کسی جنگل میں موجود اپنے ساتھیوں سے گلے مل رہا ہے ،بھارتی ٹی وی چینل نے دعویٰ کیا ہے کہ نوید جٹ جن مجاہدین سے گلے مل رہا ہے ان کا تعلق معروف جہادی تنظیم حزب المجاہدین سے ہے اور اب وہ لشکر طیبہ کی بجائے حزب المجاہدین کے صدام پیڈر گروپ سے وابستہ ہو گیا ہے ،بھارتی ٹی وی نے دعویٰ کیا کہ نوید جٹ نے یہ وڈیو جنوبی کشمیر میں واقع کسی جنگل میں بنوائی ہے جبکہ سیکیورٹی فورسز نے تاحال اس ویڈیو پر کسی بھی قسم کے تبصرے سے انکار کر تے ہوئے کہا ہے کہ وہ اس ویڈیو کی مکمل تحقیقات کے بعد ہی کوئی بات کرنے کی پوزیشن میں ہو ں گے۔

یاد رہے کہ 5فروری کو پوری دنیا میں مسلمان کشمیری بھائیوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کرتے ’’یوم کشمیر ‘‘ مناتے ہیں اور اس روز مقبوضہ کشمیر میں بھی انڈین فوج اور دیگر سیکیورٹی ادارے انتہائی سخت سیکیورٹی اور ریڈ الرٹ رکھتے ہیں تاہم اتنی سخت سیکیورٹی میں ہی چند حملہ آوروں نے جیل سے سیکیورٹی حصار میں مہاراجہ ہری سنگھ ہسپتال آنے والی پولیس وین پر ہلہ بولتے ہوئے اپنے ساتھی نوید جٹ عرف ابو حنظلہ کو رہا کروا لیا تھا جبکہ حملے میں دو سیکیورٹی اہلکار بھی مارے گئے تھے جبکہ کئی پولیس اہلکار زخمی بھی ہوئے تھے ،سری نگر میں ہونے والے اس حملے نے پوری بھارتی سرکار کو ہلا کر رکھ دیا تھا جبکہ سیکیورٹی اداروں نے اس حملے کے بعد شک کی بنیاد پر چار افراد کو حراست میں بھی لیا تھا تاہم پولیس اور دیگر سیکیورٹی ادارے نوید جٹ اور دیگر حملہ آوروں کو کوئی بھی سراغ لگانے میں مکمل طور پر ناکام رہی تھی جبکہ نوید جٹ کی اس نئی ویڈیو نے جہاں اس کے عزائم کو واضح کیا ہے وہیں بھارتی فوج میں بھی تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے۔

مزید : بین الاقوامی