مسلم لیگ (ن) کے ارکان کو نامعلوم کالز

مسلم لیگ (ن) کے ارکان کو نامعلوم کالز

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک )وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی زیر صدارت ہونیوالے پارلیمانی پارٹی کے اجلاس میں ارکان نے نامعلوم کالز کے ذریعے مخصوص ہدایات ملنے کا انکشاف کیاہے۔نجی ٹی وی جیونیوز کے مطابق یہ انکشاف اجلاس میں رکن رمیش کمار نے کیااور کہا بعض نامعلوم کالر مخصوص ہدایات جاری کرتے ہیں، ماضی میں پارٹی صدر کے انتخاب کے دوران بھی ایسی کالز آئیں اور سینیٹ الیکشن میں بھی اس قسم کی کالز آسکتی ہیں۔ذرائع نے بتایا نامعلوم کالز کے تذکرے پر وزیراعظم نے برہمی کا اظہار کیااور کہا اب کوئی نامعلوم کال کرے تو مجھے بتائیں، میری اعلیٰ سطح پر اس حوالے سے بات ہوئی ہے، اب اگر کوئی نامعلوم کال کریگا تو اسے بھگتنا پڑے گا۔ملکی سیاست میں اب نامعلوم کالز کا سلسلہ نہیں چلے گا نہ برداشت کیا جائے گا۔ذرائع کے مطابق اجلاس کے دوران جب مشاہد حسین سید اور اسد جونیجو کا بطور امید وار تعارف کرایا گیا تو (ن) لیگ کے رکن حامد حمید نے ناراضی کا اظہار کرتے ہوئے کہا دونوں سے حلف لیاجائے یہ نوازشریف کومشکل میں نہیں چھوڑیں گے، نوازشریف پارٹی صدر ہوں یانہ ہوں، یہ حلف دیں ان کیساتھ رہیں گے۔ذرائع نے بتایا حامد حمید کے بیان پر (ن) لیگ کے ارکان نے تو خوشی کا اظہار کیا لیکن مشاہد حسین سید اور اسد جونیجو اس مطالبے پر حیران رہ گئے۔

کالز انکشاف

مزید : صفحہ اول