لیسکو چیف کے خلاف توہین عدالت کی درخواست مسترد ، غلط بیانی پر درخواست گزار کو جرمانہ

لیسکو چیف کے خلاف توہین عدالت کی درخواست مسترد ، غلط بیانی پر درخواست گزار کو ...

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائی کورٹ نے لیسکو چیف کے خلاف توہین عدالت کی درخواست کو ناقابل سماعت قرار دے کر مسترد کر دیا ۔عدالت مین غلط بیانی پر درخواست گزار کو جرمانہ بھی کر دیا ۔جسٹس عائشہ اے ملک نے صنعت کار محمد زاہد کی درخواست پر سماعت کی ،درخواست گزار کے وکیل نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ عدالت نے محکمہ کو درخواست گزار کا میٹر تبدیل کرنے کا حکم دیا تھا ، عدالتی حکم کے باوجود اس کی بند فیکٹری کا میٹر تبدیل نہیں کیا جا رہا ہے درخوست گزار کے وکیل نے دوران سماعت عدالت کو بتایا کہ عدالتی حکم پر میٹر تبدیل نہ کرنا توہین عدالت زمرے میں آتا ہے ۔درخواست گزار نے استدعا کی کہ عدالت کے28ا گست 2017 ء کے حکم کی تعمیل نہ کرنے پر توہین عدالت کی کارروائی عمل میں لائی جائے۔دوران سماعت سرکاری وکیل نے بتایا کہ عدالتی حکم کی تعمیل ہوچکی ہے درخواست گزار عدالت کو گمراہ کررہا ہے ۔عدالت نے درخواست کو ناقابل سماعت قرار دے کر خارج کر دیا جبکہ عدالت نے حقائق کے برعکس توہین عدالت کی درخواست دائر کرنے پر درخواست گزار کو جرمانہ کر دیا ، عدالت نے قراردیا کہ جرمانہ کی رقم کا تعین بعد میں کیا جائے گا۔

مزید : صفحہ آخر