سینیٹ الیکشن پر ایم کیو ایم پاکستان کے اختلافات ختم، 5امیدواروں پر اتفاق

سینیٹ الیکشن پر ایم کیو ایم پاکستان کے اختلافات ختم، 5امیدواروں پر اتفاق

اسلام آباد(آن لائن)ایم کیو ایم پاکستان میں سینیٹ الیکشن کے حوالے سے اختلافات ختم، دونوں دھڑوں نے پانچ ناموں پراتفاق کرلیا۔ جنرل نشستوں پر فروغ نسیم اور کامران ٹیسوری ، ٹیکنوکریٹ سیٹ پر عبدالقادر خانزادہ ، خاتون کی نشست پر ڈاکٹر نگہت شکیل جبکہ اقلیتوں کی نشست پر سنجے پروان انتخابات میں حصہ لیں گے ۔ ایم کیو ایم کے کنوینر فاروق ستار نے خالد مقبول صدیقی کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ایم کیو ایم کے مشترکہ امیدوارکامیاب ہونگے ۔ فاروق ستار نے کہا کہ سینئر رہنماؤں میں انقلاب آیا تھا،ثالثی کا کردار بھی چلتا رہا اور پھرسینیٹ الیکشن پر تمام سینئر رہنماؤں میں معاملات طے پاگئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم پاکستان کی تقسیم نہیں چاہتے ،پارٹی رہنماؤں میں اختلافات پرشرمندہ ہیں اورتمام ووٹر اور مہاجرین سے معافی مانگتے ہیں۔خالد مقبول صدیقی نے کہا کہ ہماری جماعت ایک خاند ان کی طرح ہے ، سینیٹ انتخابات کیلئے مشاورت و اتفاق رائے سے امیدوار منتخب کئے ۔ایک سوال کے سوال جواب میں انہوں نے کہاکہ ہمارا کردار اب صاف اور واضح ہے۔بانی ایم کیو ایم کی طرف سے اشاروں کی متعلق سوال پر فاروق ستار نے ’’نو کمینٹس‘‘ کہتے ہوئے کہا کہ یہ ایک لمبا چیپڑ ہیں۔

اسلام آباد(این این آئی)الیکشن کمیشن نے ایم کیو ایم پاکستان کی کنونیر شپ سے متعلق دونوں گروپوں کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کرلیا جبکہ خالد مقبول صدیقی کی عارضی ریلیف سے متعلق درخواست مسترد کردی ۔ الیکشن کمیشن میں گزشتہ روز ایم کیوایم پاکستان بہادر آباد اور پی آئی بی کی درخواستوں پر سماعت ہوئی جس میں خالد مقبول صدیقی کے وکیل بیرسٹر فروغ نسیم نے دلائل دیئے، فریقین کے دلائل سننے کے بعد الیکشن کمیشن نے ایم کیو ایم کی سربراہی اور سینیٹ کے امیدواروں کے حوالے سے فیصلہ محفوظ کرلیا جبکہ خالد مقبول صدیقی کی عارضی ریلیف کی درخواست کو فاروق ستار کی جانب سے الیکشن کمیشن کے دائرہ اختیار کو چیلنج کرنے کی وجہ سے مسترد کردیا۔

مزید : صفحہ آخر