حضرت سخی سرور ؒ کے عرس کا دوسرا روز‘ زائرین کے قافلوں کی آمد جاری

حضرت سخی سرور ؒ کے عرس کا دوسرا روز‘ زائرین کے قافلوں کی آمد جاری

سخی سرور(نامہ نگار) بر صغیر پاک وہند کے عظیم روحانی برزگ و روحانی ]پیشوا حضرت سید احمد سلطان المعرو ف سخی سرورؒ کے 835ویں سالانہ عرس کی تقریبات عقیدت واحترام سے جاری ہیں ۔دوسرے روز بھی ملک بھر زائرین کے زائرین کے قافلوں کی آمد کا سلسلہ جاری ہے ۔جو مزار(بقیہ نمبر24صفحہ12پر )

اقدس پر چادر چڑھانے اور اپنی منتیں ادا کر رہے ہیں۔سیکورٹی انتظامات کا جائزہ لینے کے لیے ایس ڈی پی او صدر سرکل ڈیرہ غازی خان ملک بشیر اعوان نے ایس ایچ او عبدالقیوم ڈراجہ کے ہمراہ دربار سخی سرور کا دورہ کرتے ہوئے مزار اقدس پر حاضری دینے کے بعد پولیس افسران سے میٹنگ اورپولیس ملازمین کو خصوصی ہدایات دیتے ہوئے ہائی الرٹ رہنے کا حکم دیا ملک بشیر اعوان نے سی سی ٹی وی کنٹرول روم پارکنگ ایریا چیکنگ پوائنٹس کا بھی وز ٹ کیا ۔اور خود تلاشی کے عمل کی نگرانی کر تے رہے۔ دریں اثناء عرس کی تقریبات پہلے پندرہ فروری سے شروع ہوتی تھیں ۔جو تیس اپریل تک رہتی تھیں سابق ڈی سی اللہ رکھا انجم نے ڈی آئی سی کی میٹنگ میں عرس کا دورانیہ کم کرنے کے حوالے پینافلکس لگوادیئے تھے ۔کہ اگلے سال عرس پندرہ مارچ سے تیس مارچ رہے گا۔ مگر اس سال ضلعی انتظامیہ نے عرس یکم مارچ سے پندرہ مارچ کے شہر بھر پینا فلکس لگوا دیئے ہیں۔حالانکہ کے سابق روایات کے مطابق سب زیادہ رش چناب دوآبہ بیسا کھی والی جمعرات میں ہوتا ہے ۔یہ تینوں جمعرات پندرہ مارچ کے بعد آتی ہے ۔پندرہ مارچ کے بعد ہی باقاعدہ سے ہزاروں زائرین کی آمد مزید شروع ہو جاتی ہے ۔میلہ سخی سرور سے ہی پورا علاقہ روزی روٹی کماتا ہے ۔جو سال بھر کھاتے ہیں۔مگر ضلعی انتظامیہ نے مجاروان کے معاشی قتل کرنے کی تیاریاں بھی زور سے کی ہوئی ہیں عوامی سماجی حلقوں کا چیف جسٹس آف پاکستان میاں ثاقب نثار وزیر اعلیٰ پنجاب سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر