بونیر میں پٹواریوں اور قانون گویان کی ہڑتال ساتویں روز بھی جاری

بونیر میں پٹواریوں اور قانون گویان کی ہڑتال ساتویں روز بھی جاری

بونیر (ڈسٹرکٹ رپورٹر)بونیر ضلع میں شدید سردی اور بارش کے باوجود پٹواری ۔گرداور اور قانون گویان اپنے مطالبات کے حق میں ساتویں روز بھی ہڑتال پر رہے ۔ضلع کے سیاسی ،سماجی اور ریو نیو محکمہ سے تعلق رکھنے والے سرکاری اہلکاروں نے ہڑتالی کیمپ کے دورے کئے اور انکے ساتھ ہمدردری کا اظہار کیا ۔تحصیل کونسل ڈگر اور تحصیل کونسل گاگرہ میں منعقدہ اجلاسوں میں پٹواریوں کے جائیز مطالبات کے حق میں متفقہ قراردادیں منظور کی گئی اور صوبائی حکومت سے مطالبہ کیا گیا کہ وہ پٹواریوں کے چارٹر اف ڈیمانڈ کو منظور کرتے ہوئے انکے مطالبات تسلیم کرے ۔ہفتہ کے روزتحصیلدار گاگرہ نے ہڑتالی کیمپ کے دورہ کے موقع پر پٹواریوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پٹواریوں کی ہڑتال کی وجہ سے سرکاری امور شدید متاثر ہورہے ہیں ۔جس سے صوبائی حکومت کو نقصان ہورہاہے ۔ریو نیو پٹواریوں کی وجہ سے اکھٹے کی جارہی ہیں ۔مگر ہڑتال کی وجہ سے گذشتہ ایک ہفتہ سے عوام کو بھی بہت سے مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہاہے ۔صوبائی حکومت پٹواریوں کے صوبائی قیادت کے ساتھ مل کر اس مسئلے کا حل نکالے ۔اس موقع پر سینئر پٹواریوں سرمیر خان ۔بحت غفور اور عظمت خان نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہماری قیادت کی اج اہم میٹنگ ہورہی ہے ۔جس میں ائندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا ۔مگر جب تک ہمارے مطالبات تسلیم نہیں کئے جاتے ۔ہم ہڑتال جاری رکھیں گے ۔انہوں نے کہا کہ صوبائی قائیدین کی حکم پر ہم صوبائی اسمبلی اور وزیر اعلی ہاوس کے سامنے دھرنا کے ساتھ ساتھ بنی گالہ جانے سے دریع نہیں کریں گے ۔انکا کہنا تھا کہ صوبائی حکومت ہمارے ساتھ ظلم اور ناانصافی بند کرے ۔چار ٹر اف ڈٰیمانڈ جو ہم نے صوبائی حکومت کو پیش کیا ہے اور صوبائی ااسمبلی کے سٹینڈنگ کمیٹی نے سفارشات تیار کرکے وزیر اعلی کو پیش کئے ہیں ۔مگر نامعلوم وجو ہات کی بناء پر وزیر اعلی ہماری قیادت کے ساتھ ملاقات کرنے کو تیار نہیں ہے ۔مقررین نے بونیر کے تمام سیاسی سماجی ،سرکاری شحصیات سمیت میڈ یا کی کرداار کو سراہتے ہوئے کہا کہ ہماری اواز کو اقتدار کے ایوانوں تک پہنچایا ۔اورسیاسی قائیدین نے ہمارے ساتھ پارٹی وابستگی سے بالا تر ہو کر ہمدردی کا اظہار کیا ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر /رائے