ایل پی جی اےئر مکس پلانٹس کے کام میں تیزی لائی جائے ، جام کمال

ایل پی جی اےئر مکس پلانٹس کے کام میں تیزی لائی جائے ، جام کمال

کراچی (اسٹاف رپورٹر) وزیر مملکت برائے توانائی (پیٹرولیم ڈویژن) جام کمال خان نے بلوچستان کے عوام کی بہتری کے لئے ایل پی جی اےئر مکس پلانٹس کی تنصیب کے کام کو تیز کرنے پر زور دیا ہے ۔ انہوں نے بلوچستان میں ایل پی جی اےئر مکس پروجکٹس کی تنصیب اور کمیشننگ کے معاملا ت پر اسلام آبا د میں منعقدہ اجلاس میں اپنے خیالات کا اظہار کیا ۔اس اجلاس میں سید توقیر حسین ، جوائنٹ سیکریٹری( وزارت توانائی)، شاہد یوسف ، ڈائریکٹر جنرل(لیکویفائیڈ گیس ۔وزارت توانائی) اور ایس ایس جی سی کے پروجکٹ ڈائریکٹر (لیکویفائیڈ گیسس)عاصم ترمزی نے شرکت کی ۔ وزیر مملکت نے کہا کہ حکومت بلوچستان کے ان دور دراز کے علاقوں میں جہاں قدرتی گیس منتقل اوترسیل نہیں کی جا سکتی وہاں فاسٹ ٹریک کی بنیاد پر ایل پی جی اےئر مکس پلانٹس لگا نے کے لئے پر عزم ہے ۔ماضی میں ایس ایس جی سی نے بلوچستان کے علاقوں میں ایل پی جی اےئر مکس پلانٹس نصب کئے تھے جن میں گوادر (گنجائش 1ایم ایم سی ایف ڈی )، نوشکی اور سراب ( گنجائش 2ایم ایم سی ایف ڈی) اورسندھ میں کوٹ غلام محمد ( گنجائش 2ایم ایم سی ایف ڈی) شامل تھے ۔ 2016میں اکنامک کوآرڈینیشن کمیٹی (ECC) نے وزارت توانائی (پیٹرولیم ڈویژن ) کی جانب سے سندھ اور بلوچستان کے دور دراز علاقوں میں جہا ں قدرتی گیس کی فراہمی بذریعہ پائپ لائن سازگار نہیں تھی مزید 30ایل پی جی اےئر مکس پلانٹس کی تنصیب کے حوالے سے جمع کرائی گئی سمری کو منظور کیاتھا ۔ وزارت توانائی (پیٹرولیم ڈویژن )نے ایس ایس جی سی کو بلوچستان میں یہ مقصد حاصل کرنے کے لئیذمہ واری سونپی۔ اس ذمہ واری کا سبب گیس یوٹیلٹی کا وسیع تجربہ، انرجی انفرااسٹرکچر ڈویلپمنٹ کے شعبہ میں مہارت اور گزشتہ سالوں میں تسلیم شدہ اس کے ٹریک ریکارڈ تھا۔ مشترکہ کوشش کی بدولت بلوچستان کے مختلف مقامات پر پہلے سے ہی ایل پی جی اےئر مکس پروجکٹس کا آغاز ہوچکا ہے اورآواران میں (1ایم ایم سی ایف ڈی )کا ایل پی جی اےئر مکس پلانٹ تکمیل کے مراحل میں ہے ۔ یہاں یہ امر توجہ طلب ہے کہ 2013میں پاکستان نے توانائی کے بدترین بحران کا سامنا کیا جس کے نتیجے میں پاکستان کی معیشت تنزلی کا شکار ہوئی ۔ حکومت نے گیس کی طلب اور رسد کے درمیان فرق کے اس بڑے چیلنج کو قبول کرتے ہوئے تیزی سے متعدد ترقیاتی اسکیمزبشمول توانائی کی گنجائش بڑھانے کی اسکیمز کو شروع کیا ۔ اس اسکیم کا بنیادی مقصد صوبہ بلوچستان میں ترقی اورخوشحالی لانا ہے اور ان اسکیمز میں قابل ذکر ستون ایل این جی اور ایل پی جی اےئر مکس پلانٹس ہیں ۔

مزید : رائے /راولپنڈی صفحہ آخر