ایکسل لوڈ لمٹ قانون پر دوغلی پالیسی قبول نہیں،اویس چوہدری

ایکسل لوڈ لمٹ قانون پر دوغلی پالیسی قبول نہیں،اویس چوہدری

  



لاہور (سٹی رپورٹر)حکومت کی ایکسل لوڈ لمٹ کے قانون پر عملدرآمد کروانے کے حوالے سے دوغلی پالیسی قابل قبول نہیں، محمد اویس چوہدری مرکزی رہنما آل پاکستان گڈز ٹرانسپورٹ اونرز ایسوسی ایشن، اختر خان نیازی چیئرمین آل پاکستان ٹرانسپورٹ آپریٹر اینڈ ایمپلائز فیڈریشن کی قیادت میں گڈز ٹرانسپورٹرز کے وفد نے محمد اویس چوہدری ایڈووکیٹ سے اہم ملاقات کی جس میں اویس چوہدری نے کہا حکومت عدالتی حکم کے باوجود اوور لوڈنگ کو ختم کرنے اور ایکسل لوڈ لمٹ کے قانون پر مکمل عملدرآمد کروانے میں سنجیدہ نہیں ہے۔

کیونکہ اوور لوڈڈ گاڑیاں اب بھی کھلم کھلا نیشنل ہائی ویز استعمال کر رہی ہیں اور قانون نافذکرنے والے ادارے خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت چاہے تو ایک دن میں اوور لوڈنگ کو جڑ سے ختم کر سکتی ہے لیکن حکومت کی نیت صاف نہیں۔ہم حکومت پر واضح کر دینا چاہتے ہیں کہ اوور لوڈنگ پر مکمل پابندی لگوانے تک چین سے نہیں بیٹھیں گیاوور لوڈنگ کے ناسور کو ختم کروانے کے لیے ہمارے پاس ہر آپشن موجود ہے۔ ہم اوور لوڈنگ کے باعث قومی شاہراہوں کو مزید تباہ کرنے کی ہرگز اجازت نہیں دیں گے کیونکہ یہ ہمارا قومی اثاثہ ہیں جنہیں قومی خزانے سے اربوں ڈالرز خرچ کر کے تعمیر کیا جاتا ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ اوور لوڈنگ خطرناک حادثات کا سبب بنتی ہے جن میں نجانے اب تک کتنے گھر اجڑ چکے ہیں۔حکومت نے اگر دوغلی پالیسی ختم کر کیایکسل لوڈ لمٹ کے قانون پر مکمل عملدرآمد نہ کروایا تو اس بار پاکستان کے تمام گڈز ٹرانسپورٹرز ایسا احتجاج کریں گے کہ حکومت برداشت نہیں کر پائے گی, پھر اس کے بعد جو ھو گا اس کی تمام تر ذمہ داری حکومت پر عائد ہو گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 4