سندھ پولیس:ایک لاکھ 45ہزار اہلکاروں کا یونیفارم تبدیل

    سندھ پولیس:ایک لاکھ 45ہزار اہلکاروں کا یونیفارم تبدیل

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر)سندھ حکومت صوبے کی ڈسٹرکٹ اور ٹریفک پولیس کی یونیفارم کو تبدیل کرنے کی منظوری 3 مارچ کو ہونے والے کابینہ کے اجلاس میں حاصل کرے گی۔ اس ضمن میں کابینہ اجلاس کے ایجنڈے میں پولیس یونیفارم کی تبدیلی اور سال میں 3 وردیاں پولیس اہلکاروں کو فراہم کرنے کے نکتے شامل کر لیے گئے ہیں۔ سرکاری ذرائع کے مطابق ایڈیشنل چیف سیکرٹری برائے داخلہ کی سمری پر یہ نکتہ کابینہ کے اجلاس میں شامل کیا گیا ہے۔ خیال رہے کہ پولیس یونیفارم میں تبدیلی کی تجویز ابتدائی طور پر آئی جی کلیم امام نے دی تھی اور ان کی تشکیل کردہ کمیٹی نے مجوزہ نئی وردیوں کے بارے میں فیصلہ کیا تھا جس پر حکومت نے بھی آمادگی ظاہر کر دی تھی۔ آئی جی سندھ کی جانب سے پولیس یونیفارم کی تبدیلی کی تجویز گزشتہ سال مارچ میں دی گئی تھی، توقع ہے کہ کابینہ کی منظوری کے بعد نئے مالی سال 2020-21 سے پولیس کو نئے یونیفارم فراہم کیے جائیں گے یہ وردیاں ڈسٹرکٹ پولیس کے لیے ہلکی نیلی شرٹ اور نیوی بلیو ٹراؤزر اور ٹریفک پولیس کے لیے سفید پولو شرٹ اور نیوی بلیو ٹراؤزر پر مشتمل ہوں گی، منگل کو ہونے والے کابینہ کے اجلاس میں حتمی منظوری کے بعد سندھ پولیس کے ایک لاکھ 45 ہزار اہلکاروں کے یونیفارمز تبدیل کر دیے جائیں گے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر