امن معاہدہ‘ ٹرمپ نے آخر کار افغان جنگ کی حقیقت تسلیم کرلی‘ قاری حنیف جالندھری

        امن معاہدہ‘ ٹرمپ نے آخر کار افغان جنگ کی حقیقت تسلیم کرلی‘ قاری حنیف ...

  



کبیروالا(تحصیل رپورٹر)جنگ نہیں مذاکرات ہی مسائل کا حل ہیں،امریکی صدرٹرمپ نے ”افغان جنگ“ کی حقیقت کو تسلیم کرکے عقل مندی کا ثبوت دیا ہے،طالبان اور امریکہ کے درمیان ہونے والا ”امن معاہدہ“ نے ثابت کردیا ہے کہ اللہ تعالیٰ کے سوا کوئی سپر پاور نہیں ہے،افغانستان کی 19سالہ جنگ دنیا کی واحد جنگ تھی،جس میں ایک جانب دنیا کے بڑے طاقتور 48ممالک کی جدید جنگی ٹیکنالوجی اور خطرناک اسلحہ سے لیس افواج اور دوسری (بقیہ نمبر51صفحہ7پر)

جانب اللہ تعالیٰ پر بھروسہ رکھنے والے نہتے طالبان تھے،طالبان نے اپنی جدوجہد سے دنیا کو بتادیا ہے کہ جنگیں ہتھیارو ں سے نہیں بلکہ جذبوں سے لڑی اور جیتی جاتی ہیں،ان خیالات کا اظہار تنظیم وفاق المدارس اسلامیہ العربیہ پاکستان کے مرکزی ناظم اعلیٰ مولانا قاری محمد حنیف جالندھری نے جامعہ دارالعلوم عیدگاہ کبیروالا کے سالانہ جلسہ دستار فضیلت وتقریب تکمیل قرآن الکریم وصحیح بخاری شریف سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ افغانستان کی 19سالہ جنگ میں مدارس ے فیض یافتہ طالبان نے تاریخ ساز فتح حاصل کرکے اسلام کی حقانیت پرمہر ثبت کردی ہے،ماضی کی دو عظیم جنگوں میں پوری دنیا دو حصوں میں تقسیم تھی لیکن افغانستان پر مسلط کی گئی جنگ میں پوری دنیا طالبان کے خلاف کھڑی تھی اور اپنے بھی ساتھ نہیں تھے۔اس کے باوجود وہ جنگ،جس کے بارے میں حملہ آور افواج کا یہ دعویٰ تھا کہ وہ یہ جنگ چند دنوں میں جیت لیں،اس جنگ کو19سال میں بھی نہ جیتا جاسکا۔انہوں نے کہا کہ نیب کی جانب سے تمام شعبوں سے تعلق رکھنے والوں کے خلاف کرپشن کے کیس بنائے جارہے ہیں،صرف دینی مدارس اور علماء کرام واحد طبقہ ہیں،جن کے بارے میں نیب کا کوئی ایک کیس بھی ابھی تک سامنا نہیں،حالانکہ علماء کرام اور دینی مدارس کو لاکھوں روپے کے عطیات ملتے ہیں لیکن الحمد اللہ! مدارس کے مہتمم صاحبان اور علماء کرام کے دامن کرپشن کے داغوں سے پاس ہیں۔قبل ازیں مولانا قاری محمد حنیف جالندھری نے صحیح بخاری شریف کی آخری حدیث کا درس دیتے ہوئے کہا کہ حضرت امام بخاری ؒ کی تصنیف بخاری دنیا بھر میں پڑھی اور پڑھائی جاتی ہے،صحیح بخاری کی آخری حدیث میں توحید کا درس دیا گیا ہے، جامعہ دارالعلوم عیدگاہ کبیروالا کے ناظم تعلیمات مولانا مفتی حامد حسن نے جامعہ ہذا کی سالانہ کارکردگی پیش کرتے ہوئے بتایا کہ آج ہونیوالا تکمیل بخاری شریف کا یہ 62واں اجتماع ہے،امسال تحصیص،کتب،تجویدوحفظ وسبعہ عشرہ میں کل 549طلباء وطالبات نے سند فراغت حاصل کی ہے جبکہ جامعہ ہذا کے قیام 1953ء سے لیکر اب تک 9731فضلاء اور حفاظ ادارہ سے مستفیض ہوئے ہیں۔جامعہ ہذا کے طالب علم حافظ جواد یوسف نے عصری تعلیم (میٹرک) میں خصوصی پوزیشن اور چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر باجوہ سے اعزازی شیلڈ حاصل کی اور 6نمایاں پوزیشن کے ساتھ جامعہ دارالعلوم عیدگاہ کبیروالا نے وفاق المدارس العربیہ پاکستان کی جانب سے پاکستان بھر کے دینی مدارس میں سوئم پوزیشن پر آنے کا اعزاز حاصل کیا ہے۔مذکورہ اجتماع سے ملک کے معروف مشائخ عظام ونامور علماء کرام پیر طریقت مولانا حافظ ناصر الدین خاکوانی،،مفتی محمد حسن،مولانا محمد ارشاد احمد،مولانا زبیر احمد صدیقی،مولانا عبدالرحمن جامی،مولانا محمد احمد حنیف جالندھری،مفتی اویس ارشاد،مفتی جاوید اختر صدیقی،مولانا عمر فاروق اصغر،مفتی محمد سعداور دیگر خطاب کیا۔مولانا عبدالکریم نعمانی، ممبر صوبائی اسمبلی مولانا معاویہ اعظم،مولانا مسعود عثمانی،مولانا عبدالخالق رحمانی،سید امجد شاہ معاویہ،مولانا افتخار احمد حقانی،مولان رب نواز ہراج،ممبران ضلعی امن کمیٹی،فیاض اسلم چوہدری،مفتی عمرفاروق،مولانا عبدالرحمن لڑکا،مولانا عبداللہ عمر،میونسپل کمیٹی کبیروالا کے سابق چیئرمین اطہر یوسف خان بھٹہ،ملک طاہر شفیق،مہر عبدالرزاق جوتہ،حاجی محمد ارشد سنگا،مہر محمد افضل جوتہ،قاری محمد عمر،حفیظ الرحمن فاروقی،حاجی محمد حسین شاہد، نمبردار غلام احمد خان بھٹہ،چوہدری فاروق گل،شیخ انورعلی،حافظ طاہر محمود،ملک طالب حسین،چوہدری عبدالرشید ارائیں،چوہدری محمد اکرم خالد،حاجی محمد نواز طاہر،شیخ اصغر علی،ملک فاروق احمد،حاجی محمد انور،حاجی محمد سہیل،حاجی ملک محمد اشرف،شیخ سہیل انور اور دیگر شخصیات نے شرکت کی۔اجتماع کے آخرمیں عالم اسلام اور پاکستان کی خیروعافیت کے خصوصی دعا اور سند فراغت حاصل کرنے والے فضلاء اور حفاظ کی دستار بندی کی گئی۔

تسلیم

مزید : ملتان صفحہ آخر