کلفٹن میں غیرقانونی الاٹمنٹ سے قومی خزانے کو 30 کروڑ روپے کا نقصان پہنچانے کا انکشاف

کلفٹن میں غیرقانونی الاٹمنٹ سے قومی خزانے کو 30 کروڑ روپے کا نقصان پہنچانے کا ...
کلفٹن میں غیرقانونی الاٹمنٹ سے قومی خزانے کو 30 کروڑ روپے کا نقصان پہنچانے کا انکشاف

  



کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) کراچی کے علاقے کلفٹن میں غیرقانونی الاٹمنٹ سے قومی خزانے کو 30 کروڑ روپے کا نقصان پہنچانے کا انکشاف ہوا ہے، نیب نے کےایم سی افسران ودیگر کےخلاف ریفرنس کی منظوری دے دی،نیب نےمرحوم کےایم سی ڈائریکٹراشفاق انصاری کےخلاف بھی ریفرنس تیارکرلیا،ریفرنس میں تین پرائیویٹ افراد کے نام بھی شامل ہیں۔

نجی ٹی وی کے مطابق اشفاق انصاری ودیگر ملزمان نے کلفٹن میں 2 پلاٹوں کی غیرقانونی الاٹمنٹ کی، کے ایم سی افسران نے اپنے عہدے کا ناجائز استعمال کیا۔ سندھ حکومت کی ملکیت دونوں پلاٹوں کو ملی بھگت سے الاٹ کیا گیا، ملزمان نے سرکاری پلاٹوں کی جعلی اور غیرقانونی دستاویزات بنائیں۔الاٹمنٹ کے بعد غیرقانونی طور پر دونوں پلاٹوں کو لیز بھی کیا، ملزمان نے بدعنوانی سے سرکاری خزانے کو 30 کروڑ روپے کا نقصان پہنچایا۔واضح رہے کہ کراچی کے مختلف علاقوں میں ریلوے کی زمینوں پر بھی پلاٹوں پر قبضہ کیا گیا تھا جسے اب سپریم کورٹ کے حکم کے بعد کارروائی کرکے واگزار کرایا جارہا ہے۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی