دہشت گردی برداشت نہیں ، صرف نگران ہیں ، مدت میں توسیع نہیں ہوگی ،الیکشن وقت پر اور اقتدار بلا تاخیر منتقل کریں گے : کھوسو

دہشت گردی برداشت نہیں ، صرف نگران ہیں ، مدت میں توسیع نہیں ہوگی ،الیکشن وقت ...
دہشت گردی برداشت نہیں ، صرف نگران ہیں ، مدت میں توسیع نہیں ہوگی ،الیکشن وقت پر اور اقتدار بلا تاخیر منتقل کریں گے : کھوسو

  

اسلام آباد ( مانیٹرنگ ڈیسک) نگران وزیراعظم میر ہزار خاں کھوسو نے انتخابات ملتوی ہونے کا تاثر رد کرتے ہوئے واضح کیا ہے کہ الیکشن اپنے وقت پر ہونگے اور نگران حکومت منتخب نمائندوں کو کسی تاخیر کے بغیر اقتدار منتقل کردے گی انہوں نے یہ بھی واضح کیا کہ الیکشن ملتوی کرانے کیلئے دہشت گردی کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا بلکہ ان کی روک تھام کیلئے موثر اقدامات کیے جارہے ہیں ۔ قوم سے خطاب میں انہوں نے دہشت گردی اور بد امنی پر تشویش کا اظہار کیا اور کہا کہ امن و امان قائم کرنا آئینی ور پر سوبائی حکومت ک ی ذمہ داری ہے ۔ قوم سے خطاب میںنگراں وزیر اعظم نے کہا ہے کہ حکومت اپنی مدت میں ایک دن کی بھی توسیع نہیں کرے گی جو بھی جماعت انتخابات جیتے گی اقتدار اس کے حوالے کردیا جائے گا۔ انہوں نے دہشت گردی اور بد امنی پر تشویش کا اظہار کیا اور کہا کہ امن و امان قائم کرنا آئینی ور پر سوبائی حکومت ک ی ذمہ داری ہے ۔نگراں وزیراعظم میرہزارکھوسو نے میں کہا کہ پاکستان کا قیام برصغیر کی آئینی اوجمہوری جدوجہد کا ثمر ہے جس کا سہرا بابائے قوم قائد اعظم محمدعلی جناح کے سر ہے ،قائد اعظم کی ہی انتھک محنت سے علامہ اقبال کا خواب شرمندہ تعبیر ہوا لیکن قیام پاکستان کے بعد ہی ملک کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔ انہوں نے کہا کہ میں آپ سے ایک ایسے وقت پر مخاطب ہوں جب ملک میں عام انتخابات ہونے جارہے ہیں اورمیں قوم کو یقین دلاتا ہوں کہ انتخابات صاف ،شفاف اورغیرجانبدارانہ ہوں گے اوریہی نگراں حکومت کا مینڈیٹ ہے ،انہوں نے کہا کہ انتخابات جیتنے والی جماعت کو اقتدار سونپ دیا جائے گا اورحکومت اپنی مدت میں ایک دن کی بھی توسیع نہیں کرے گی۔نگراں وزیراعظم نے کہا کہ ہم کسی کو ملک کے امن ومان سے کھیلنے کی اجازت نہیں دیں گے مگرافسوس کے ساتھ کہنا پڑ رہا ہے کہ کراچی، خیبرپختونخوا اوربلوچستان میں دہشت گردی کے واقعات میں انسانی جانوں کا ضیا ع ہوا جس کی ہم سختی سے مذمت کرتے ہیں، حکومت نے انتخابات کے دوران کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لئے فوج کے کوئیک رسپانس دستے تعینات کئے ہیں ،وزارت داخلہ نے حساس سیل بھی قائم کیا ہے جو معلومات اکٹھے کرکے صوبائی حکومتوں کو ارسال کرے گا کیوں کہ امن وامان برقراررکھنا صوبوں کی ذمہ داری ہے ،بلوچستان سے نگراں وزیراعظم کے تقررسے امید ہے کہ اس سے صوبے کا احاساس محرومی ختم کرنے میں مدد ملے گی، میں نے حال ہی میں بلوچستان کا دورہ کیا مجھے خوشی کہ تمام جماعتیں انتخابات میں حصہ لے رہی ہیں ،کراچی میں امن وامان کی صورت حال ممکن بنانے کے لئے سندھ کا دورہ بھی کیا۔نگراں وزیر اعظم نے کہا کہ عوام کو لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے جن مشکلات کا سامنا اس کا پورا احساس ہے ہمیں یہ بحران ورثے میں ملا لیکن میں نے یہ بحران حل کرنے لئے وزازرت خزانہ کو 45ارب روپے جاری کرنے کا حکم دے دیا ہے، وزارت پانی وبجلی کوخصوصی ہدایت کی ہے کہ 10مئی کی شام سے 36 گھنٹے کے لے پورے ملک میں کہیں بھی لوڈ شیڈنگ نہ کی جائے، وزارت خزانہ کو ہدایت جاری کہ ہے آئندہ بجٹ حقیقت پسندانہ ہو اورغیرضروری اخراجات میں کٹوتی کی جائے تاکہ عام آدمی پر غیرضروری بوجھ نہ ڈالا جاسکے، مجھے امید ہے کہ ہم آنے والی حکومت کو بہتر معیشت دے کر جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ میں تمام سیاسی جماعتوں اوران کے کارکنوں کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں کہ وہ عام انتخابات میں بھرپور حصہ لے رہے ہیں اورایک منتخب حکومت ہی ملکی مسائل حل کرسکتی ہے، پاکستان میں عام اتنخابات پر پوری دنیا کی نظریں ہیں غیرملکی مبصرین کی ٹیمیں ملک میں موجود ہیں اورہمیں اپنے اتحاد سے یہ ثابت کرنا ہوگا کہ ہم ایک ذمہ داراورباشعورقوم ہیں۔

مزید :

اسلام آباد -اہم خبریں -