پی سی بی نے وقاریونس کی تمام شرائط تسلیم کر لیں

پی سی بی نے وقاریونس کی تمام شرائط تسلیم کر لیں

  



                                 لاہور(آئی این پی)پاکستان کرکٹ بورڈ نے سابق کپتان وکوچ وقاریونس کی تمام شرائط تسلیم کرلیں، وقاریونس مکمل بااختیار اورمضبوط ہیڈکوچ ہوں گے ۔پی سی بی کے ذرائع کے مطابق رسمی کاغذی کارروائی کے بعد ماضی کے اسپیڈ اسٹار وقار یونس پاکستانی کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ کی ذمے داریاں باضابطہ سنبھالیں گے۔ انہوں نے اپنے کام میں مکمل اختیار اور ٹیم سلیکشن میں کردار کی شرائط رکھی ہیں جنہیں کرکٹ بورڈ نے مان لیا ہے۔ ذرائع نے مزید بتایا کہ اس بار وقار یونس کو بھاری معاوضہ ادا کیا جائیگا، وہ بورڈ حکام پر واضح کر چکے کہ کمنٹری و دیگر کوچنگ اسائمنٹس سے اچھی خاصی رقم کما لیتے ہیں، لہذا انھیں بھی واٹمور کے برابر رقم دی جائے، بورڈ بھی انھیں پرکشش تنخواہ کی آفر کرنے میں کوئی مسئلہ محسوس نہیں کرتا، یاد رہے کہ واٹمور ماہانہ 15لاکھ روپے وصول کرتے تھے۔وقار ےونس کا پہلا اسائنمنٹ اگست میں سری لنکا کی سیریز ہوگی۔ لاہور میں چھ مئی سے شرو ع ہونے الے سمر کیمپ کی نگرانی قومی اکیڈمی کے ہیڈ کوچ محمد اکرم کریں گے۔ معین خان اور سلیکٹرز وقتا فوقتا کیمپ کا دورہ کرتے رہیں گے۔ اکیڈمی کے کوچ، ٹرینر اور فزیو کیمپ میں ذمے داریاں سنبھالیں گے۔ قومی ٹیم کا عہدہ سنبھالنے کے لئے اور پاکستان کرکٹ بورڈ کے ساتھ دو سالہ معاہدے پر دستخط کرنے کے لئے وقار یونس سڈنی سے لاہور آئے ہیں۔ ان کی پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین نجم سیٹھی کے ساتھ فیصلہ کن بات چیت ہوئی ہے۔ جس میں معاہدے کی اکثر شقوں کو طے کر لیا ہے۔ جس کے مطابق سابق کپتان کو دوسال کے لئے یہ عہدہ دیا جائے گا۔ انہوں نے بعض سخت شرائط رکھی ہے۔ خاص طور پر پرانے اور آزمودہ کار کھلاڑیوں کے حوالے سے وہ فری ہینڈ چاہتے تھے۔ سلیکٹرز وقار یونس کی مشاورت سے ٹیم سلیکٹ کریں گے اور وقار یونس کو سلیکشن میں منیجر اور چیف سلیکٹر معین خان کے ساتھ اہم کردار دیا جائے گا۔

مزید : میٹروپولیٹن 3


loading...