بھارت کا پاکستانی زائرین کو معین الدین چشتیؒ کے عرس کیلئے ویزہ دینے سے انکار

بھارت کا پاکستانی زائرین کو معین الدین چشتیؒ کے عرس کیلئے ویزہ دینے سے انکار

  



اسلام آباد( اے این این ) بھارت میں پانچ سو پاکستانی زائرین کو حضرت خواجہ معین الدین چشتیؒ کے عرس میں شرکت کیلئے ویزے جاری کرنے سے انکار کردیا، پاکستان کا شدید احتجاج،بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کرکے احتجاجی مراسلہ حوالے کیا گیا۔ جمعہ کو دفتر خارجہ سے جاری بیان کے مطابق بھارت کی جانب سے پانچ سو زائرین کو اجمیر میں حضرت خواجہ معین الدین چشتیؒ کے عرس میں شرکت کیلئے ویزے نہ دینے پر بھارت کے ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کیا گیا ہے اور اس پر احتجاج ریکارڈ کرایا گیا۔ دفتر خارجہ نے بھارتی حکومت کے اس رویے پر گہری مایوسی اور تشویش ظاہر کی۔ بیان میں کہا گیا کہ بھارت کی جانب سے زائرین کو ویزہ جاری کرنے سے انکار، دونوں ملکوں کے درمیان1974ء کے ویزہ پروٹوکول کی خلاف ورزی ہے اور دونوں ملک ایک دوسرے کے زائرین کو مذہبی مقامات اور مزارات پر حاضری دینے کیلئے ویزوں کے اجراء کے پابند ہیں۔ بیان میں کہا گیا کہ بھارت کا یہ اقدام نہ صرف دونوں ملکوں کے درمیان تعلقات کو معمول پر لانے کی کوششوں بلکہ دونوں ملکوں اور عوامی سطح پر رابطوں کے جذبے کے بھی منافی ہے۔ واضح رہے کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان 1974ء میں دونوں ملکوں کے شہریوں کو مذہبی اور مقدس مقامات پر حاضری کیلئے ویزوں کے اجراء کا معاہدہ کیا گیا تھا۔

مزید : صفحہ اول


loading...