موسیقاروں کے لیے بری خبر

موسیقاروں کے لیے بری خبر
موسیقاروں کے لیے بری خبر

  



برلن (بیورورپورٹ) مدھر موسیقی جب کانوں میں رس گھولتی ہے تو انسان خوشی سے جھوم اٹھتا ہے لیکن اگر یہ کان موسیقی سننے والے کی بجائے موسیقی بجانے اور گانے والوں کے ہوں تو وہ جھولنے کی بجائے گھوم بھی سکتے ہیں۔ ایک تازہ تحقیق میں انکشاف ہوا ہے کہ موسیقی کے پیشے سے وابستہ لوگوں میں قوت سماعت سے محروم ہونے کا خطرہ عام لوگوں کی نسبت چارگنا زیادہ ہے۔ جرنل آف آکو پیشنل اینڈ انوائرنمینٹل میڈیسن میں چھپنے والی اس تحقیق میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ موسیقی کو بطور پیشہ اختیار کرنے والے افراد میں ٹنی ٹس نامی بیماری کا خطرہ بھی عام لوگوں سے 57 فیصد زیادہ ہے۔ اس بیماری کا شکار افراد کو ہر وقت اپنے کان بجتے محسوس ہوتے ہیں۔ اس تحقیق میں جرمنی کے 70 لاکھ لوگوں کی صحت کے چار سالہ ڈیٹا کا مطالبہ کیا گیا، ان لوگوں میں 2,227 پیشہ ور موسیقار بھی شامل تھے۔ ماہرین نے موسیقاروں کو مشورہ دیا ہے کہ اونچی آواز میں میوزک بجاتے وقت کانوں کیلئے مخصوص پلگ استعمال کریں تاکہ ان کے کان بلند آواز سے ہونے والے نقصان سے محفوظ رہیں۔

مزید : تفریح