محمد عامر پھر کرکٹ کھیلنے کے خواب دیکھنے لگے

محمد عامر پھر کرکٹ کھیلنے کے خواب دیکھنے لگے
محمد عامر پھر کرکٹ کھیلنے کے خواب دیکھنے لگے

  



لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) سپاٹ فکسنگ سکینڈل میں پابندی کے شکار پاکستانی فاسٹ باﺅلر محمد عامر نے کہا ہے کہ وہ شائقین کرکٹ کو پھر سے وہی پرانا عامر بن کر دکھائیں گے، ٹیم میں واپسی کیلئے بے چین ہوں، ذہنی طور پر تھوڑی دشوار ہوگی، انٹرنیشنل کرکٹ کے دباﺅ کا بوجھ اٹھانے کے لیے پوری طرح تیار ہوں۔ ایک انٹرویو میں محمد عامر نے کہا کہ وہ ان دنوں کافی خوش ہیں کیونکہ کرکٹ میں ان کی واپسی میں تھوڑا عرصہ ہی باقہ رہ گیا ہے اور وہ ایک بار پھر سے مسابقتی کرکٹ میں گیند دوبارہ اپنے ہاتھوں میں تھامنے کے لیے بے چین ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ان کی انٹرنیشنل کرکٹ میں دھماکہ خیز انٹری کے ساتھ ہی اگر انہیں عظیم فاسٹ باﺅلر وسیم اکرم سے ملایا گیا تو اس میں کچھ غلط نہیں تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ ہمیں سازش کے تحت اس بدترین سکینڈل میں پھنسایا گیا لیکن یہ سب کچھ ماضی کا حصہ ہے لہٰذا وہ نئے کیریئر کے آغاز کیلئے پرعزم ہیں۔ محمد عامر نے کہا کہ سپاٹ فکسنگ سکینڈل کے بعد زندگی انتہائی بھیانک معلوم ہوئی، دوستوں نے بھی آنکھیں پھیر لیں لیکن کچھ نے ساتھ نہیں چھوڑا، جس پر ان کا شکر گزار ہوں۔ محمد عامر نے کہا کہ لندن میں جیل کاٹنا اور عدالتوں کے چکر یہ سب کچھ میرے لئے اتنا خوفناک تھا کہ اسے بیان نہیں کرسکتا، لیکن وہ سب کچھ گزرگیا۔ انہوں نے کہا کہ بورڈ اگر اس وقت ہمارا ساتھ دیتا تو شاید حالات مختلف ہوتے لیکن اعجاز بٹ نے ہماری ہی مخالفت شروع کردی۔

مزید : کھیل