فوج کے خلاف جارحانہ جملے ملکی سالمیت پر حملے ہیں،عمر ڈار

فوج کے خلاف جارحانہ جملے ملکی سالمیت پر حملے ہیں،عمر ڈار

لاہور(نمائندہ خصوصی) تحریک انصاف کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل عمرڈار نے کہا کہ فوج کیخلاف جارحانہ اور اشتعال انگیز جملے پاکستان کی سا لمیت پرحملے کے زمرے میں آتے ہیں جبکہ وزیراعظم میاں نوازشریف کی مجرمانہ خاموشی ایک بڑاسوالیہ نشان ہے۔وفاقی اور سندھ کی صوبائی حکومت الطاف حسین کے حالیہ بیان پر فوراً اپنااپنا پالیسی بیان دے۔عمران خان کیخلاف مسلسل زہر اگلنے والے منسٹرڈس انفارمیشن بھی خاموش رہے جس پرڈی جی آئی ایس پی آر کا اپنے ادارے کی طرف سے دوٹوک موقف منظرعام پرآیا۔اپنے ایک بیان میں عمرڈارنے مزید کہا کہ عوام کوریاست کیخلاف بھڑکانااوردشمن ملک کے اداروں سے مددمانگنا پاکستان کی سا لمیت اورقومی حمیت کیخلاف بدترین جارحیت ہے ۔پاک فوج اورفوجی قیادت کیخلاف ہرزہ سرائی برداشت نہیں کی جائے گی ۔انہوں نے کہا کہ جو شر پسند عناصرپاکستان کے قومی مفادات پرناکام خودکش حملے کررہے ہیں ان کیخلاف پرویزرشیدکی زبان نہیں کھلتی جبکہ عمران خان کیخلاف موصوف کی زبان بندنہ ہوتی ۔ حکمران اپنے دشمن آپ ہیں ،پرویز رشید کی صورت میں نادان دوست جعلی حکومت کی ناؤڈبودیں گے ۔انہوں نے کہا کہ نام نہادحکومت اورجمہوریت کیخلاف سازش کرنیوالے باہرنہیں بلکہ ایوان اقتدار کے اندر ہیں ۔ اگرمیاں نوازشریف اپنے آس پاس خوشامدیوں کاہجوم اکٹھا کرنے کی بجائے مٹھی بھرباودفااورباصفا دوست تلاش کرتے توآج سیاسی طورپران کی حالت قابل رحم نہ ہوتی ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1