ایم کیو ایم کے قائد کا بیان صحافتی ضابطہ اخلاق کی خلافورزی ہے،ڈاکٹر نوشینہ

ایم کیو ایم کے قائد کا بیان صحافتی ضابطہ اخلاق کی خلافورزی ہے،ڈاکٹر نوشینہ

لاہور (ایجوکیشن رپورٹر) پنجاب یونیورسٹی ادارہ علوم ابلاغیات کی انچارج ڈائریکٹر ڈاکٹر نوشینہ سلیم اور ترجمان اسسٹنٹ پروفیسر شبیر سرور نے متحدہ قومی موومنٹ کے رہنماء الطاف حسین کے پاکستان کی سالمیت اور پاک آرمی کے خلاف بیانات کی میڈیا پر براہ راست نشر کئے جانے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ تمام صحافتی ضابطہ اخلاق اور پیمرا کوڈ آف کنڈکٹ کی سنگین خلاف ورزی ہے ۔ انھوں نے وزات اطلاعات، پیمرا اور الیکٹرانک میڈیا مالکان پر زور دیا کہمل بیٹھ کرالیکٹرانک میڈیا ضابطہ اخلاق وضع کریں    ۔ اور اس ضمن میں پنجاب یونیورسٹی ادارہ علوم ابلاغیات کے پلیٹ فارم سے تمام تر اکیڈمک سپورٹ اور تعاون کی پیشکش کی ہے۔ ترجمان ادارہ علوم ابلاغیات نے کہا ہے کہ جس معاشرے میڈیا ذمہ دارانہ کردار ادا نہیں کرتا وہاں سخت میڈیا قوانین کا نفاذ ناگزیر ہوجاتا ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ ایسی صورتحال سے بچاؤ کے لئے ضروری ہے کہ میڈیا ضابطہ اخلاق وضع کرے اور اسے عملی طور پر لاگو کیا جائے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4