ایم کیو ایم کی فوج پر الزام تراشی قابل مذمت ہے،پی پی انسانی حقوق ونگ

ایم کیو ایم کی فوج پر الزام تراشی قابل مذمت ہے،پی پی انسانی حقوق ونگ

 لاہور(نمائندہ خصوصی) پیپلز پارٹی انسانی حقوق ونگ لاہور کے رہنما نصیر احمد شیخ علی سعید نے الطاف حسین کی جانب سے قومی سلامتی کے اداروں پر ہرزہ سرائی کی مذمت کرتے ہوئے کہ الطاف حسین نے وطیرہ بنا لیا ہے کہ وہ سیاسی شخصیات قومی سلامتی کے اداروں کے متعلق حالت غیر میں الزامات کی بوچھاڑ کر دیتے ہیں اور اصلی حالت کی واپسی پر اپنے بیان سے مکر جاتے ہیں اور معافیاں مانگنا شروع کر دیتے ہیں ایم کیو ایم جب سے کراچی آپریشن میں ایکسپوز ہوئی اور ان کی جماعت کے دہشت گردوں کو گرفتار کیا گیا ہے ایم کیو ایم اور الطاف حسین پریشانی اور غصہ کے عالم میں بے سرو پاباتیں کر رہے ہیں    حالت غیر میں ٹیلی فون کے ذریعے گھنٹوں اپنے خطاب میں قومی سلامتی کے اداروں کو حرف تنقید بناتے ہیں قومی سلامتی کے ادارے کراچی میں آپریشن کر رہے ہیں اس آپریشن کی حمایت تمام جماعتیں کر رہی ہیں اور یہ آپریشن بلا تفریق کیا جا رہا ہے گزشتہ دنوں الطاف حسین نے اخلاقیات کی تمام حدود قیود پھلانگ لی ہیں بے ہودہ بیان بازی کے ذریعے میڈیا پر آکر پاکستان کے عوام کو ریاست اور قومی سلامتی کے اداروں کے خلاف کھڑی کرنے کی بھونڈی سازشی کی جا رہی ہے جو کہ قابل مذمت فعل ہے دہشت گردی اور کراچی کا امن تبادہ کرنے والے ملزمان کی گرفتاری پر ایم کیو ایم اور الطاف حسین کا ردعمل ناقابل فہم ہے انہوں نے کہا کہ الطاف حسین کو پاک فون کے خلاف ایسی بہودہ بیان بازی نہیں کرنا چاہیے تھی پاکستان کی افواج جو کہ سراسر غیر سیاسی اور غیر جانبدانہ طریقے سے آپریشن کر رہی ہے اس آپریشن کو پوری قوم کی حمایت حاصل ہے دشت گرد اور جرائم پیشہ افراد کا قلع قمع کیا جا رہا ہے انہوں نے مطالبہ کیا کہ الطاف حسین کے ٹیلی فونک خطاب پر پابندی لگائے جانے اور قومی سلامتی کے اداروں پربہتان بازی پر مقدمہ درج کر کے وطن واپس لایا جائے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4