ہمارا دامن صاف ہے دوسروں پر الزام لگانے والے اپنے گریبانوں میں جھانکیں :عاطف خان

ہمارا دامن صاف ہے دوسروں پر الزام لگانے والے اپنے گریبانوں میں جھانکیں :عاطف ...

پشاور( پاکستان نیوز)خیبر پختونخوا کے وزیر برائے ابتدائی و ثانوی تعلیم محمد عاطف خان نے کہا ہے کہ ہمارا دامن صاف ہے اور کوئی ایک پائی کا کرپشن بھی ثابت نہیں کر سکتا۔ دوسروں پر الزام لگانے والے اپنے گریبانوں میں جھانکیں ، پولیس کے بلٹ پروف جیکٹس اور اسلحہ کی خریداری میں کس نے کرپشن کی ہے ۔بچہ بچہ جانتا ہے کہ ایزی لوڈ اور ایس ایم ایس کہاں ہوتے تھے اور کس کے مشیر پلی بارگین کے تحت ساڑھے25کروڑ روپے دے رہے ہیں عوام اس کا حساب لگائیں کہ کروڑوں روپے پلی بارگین میں دینے والوں نے صوبائی خزانے کو کتنا نقصان پہنچایا ہو گا۔وہ یونین کونسل کٹہ خٹ کے علاقے دوبئی اڈہ میں ایک بڑے شمولیتی جلسے سے خطاب کر رہے تھے ۔یونین کونسل کٹہ خٹ پہنچنے پر عوام نے صوبائی وزیر تعلیم کا پرتپاک استقبال کیا اور انہیں جلوس کی شکل میں جلسہ گاہ لایا گیا ۔جلسے سے قومی اسمبلی کے رکن مجاہد خان،ضلعی کونسلر شیر بھادر خان،وقار خان،ڈپٹی ایڈوکیٹ جنرل ریاض پائندہ خیل ،یوتھ کونسلر اشیاق خان اور سابق ناظم نگار خان نے بھی خطاب کیا جبکہ اس موقع پر سید مہمند،افتخار خان،شیر بھادر،اکبر علی،شریف کاکا،اسرار استاد،محمد گل ،حضرت خان،شہاب ممبر،محمد خان،سبحان علی،زرشاد،حضرت خان اورجہانزیب سمیت ڈھائی سو سے زائد افراد نے عوامی نیشنل پارٹی سے مستعفی ہو کر تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کیا ۔صوبائی وزیر تعلیم نے نئے شامل ہونے والوں کو مبارکباد دی اور کہا کہ انہیں اپنے فیصلے پر ندامت نہیں ہو گی ۔محمد عاطف خان نے کہا کہ پچھلی دور حکومت میں وزراء کے کچن اور حجروں کے خرچے پٹواری اور تھانیدار برداشت کرتے تھے ۔لیکن تحریک انصاف کی حکومت نے پٹواریوں کا قبلہ درست کر کے محکمہ مال کے ریکارڈ کو کمیوٹرائزاڈ کیا تاکہ کرپشن اور رشوت کا خاتمہ ہو۔انہوں نے کہا کہ محکمہ پولیس میں اصلاحات سے سیاسی مداخلت کا خاتمہ ہو گیا ہے اور پولیس کو عوام کا تابع بنا دیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ سونامی ختم نہیں ہوئی بلکہ روز بروز اس میں اضافہ ہو رہا ہے ۔آئے روز تحریک انصاف میں شمولیتیں اس بات کی عکاسی کرتی ہے کہ عوام کا حکومت پر اعتماد بڑھ گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ پچھلی دور حکومت میں نوکریوں کی بولیا ں لگائی جاتی تھی یونیورسٹیوں ،محکمہ تعلیم اور پولیس میں گریڈ کے حساب سے ایزی لوڈ اور ایس ایم ایس ہوتے تھے۔انہوں نے کہا کہ جب عوام کو ان کا حق نہیں ملتا تو وہ مجبور ہو کر دوسرا راستہ اختیار کرتے ہیں، معاشرہ اس وقت تباہ ہو جاتا ہے جب نااہل لوگوں کواوپر بٹھایا جاتا ہے ۔انہوں نے کہاکہ ترقیاتی کام عوام پر احسان نہیں بلکہ یہ تو ان کاحق ہے کہ عوام کا پیسہ عوام پر خرچ ہو ۔ عوام پر ترقیاتی کاموں کے احسانات جتانے والے اپنی جیب سے ایک سڑک تعمیر کر کے تو دکھائیں ۔صوبائی وزیر تعلیم نے کہا کہ صوبے میں پہلی مرتبہ 25ہزار اساتذہ میرٹ کے ذریعے بھرتی ہوئے ہیں اور اگر کسی نے ان بھرتیوں میں ایک پائی کی رشوت ثابت کی تو سیاست سے کنارا کشی اختیار کرلیں گے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر