اطلاعات تک رسائی کے حق پر قانون سازی کی جائے، آصف زرداری

اطلاعات تک رسائی کے حق پر قانون سازی کی جائے، آصف زرداری

  

اسلام آباد(پ ر )سابق صدر پاکستان اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے صدر آصف علی زرداری نے پریس کی آزادی کے عالمی دن کے موقع پر اپنے پیغام میں کہا ہے کہ آج مناسب موقع ہے کہ ہم اس بات کا عہد کریں کہ صحافیوں کے خلاف جرائم کا خاتمہ کریں اور اس کے ساتھ ہی یہ مطالبہ کریں کہ اطلاعات تک رسائی کے حق پر قانون سازی کی جائے۔ اپنے پیغام میں انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلزپارٹی کو اس بات پر سخت تشویش ہے کہ صحافیوں کے خلاف بلا کسی روک ٹوک کے جرائم سرزد کئے جا رہے ہیں اور پارٹی کو یہ بھی تشویش ہے کہ حکومت اطلاعات تک رسائی کے لئے قانون سازی میں تاخیری حربے استعمال کر رہی ہے۔ آصف علی زرداری نے کہا کہ پریس کی آزادی کے عالمی دن کے موقع پر ریاست کے تمام اداروں سے کہتے ہیں کہ صحافیوں کے خلاف جرائم کرنے والوں کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے۔ انہوں نے اس موقع پر تمام صحافیوں کو زبردست خراج تحسین پیش کیا جو سخت مشکل اور خطرناک حالات کے باوجود اپنے فرائض سرانجام دے رہے ہیں ۔ انہوں نے پاکستان پیپلزپارٹی کے اس عزم کو دہرایا کہ پارٹی میڈیا کے ورکروں کی آزادی اور حفاظت کے لئے نہ صرف یہ کہ پاکستان بلکہ تمام دنیا کے صحافیوں کے لئے پرخلوص ہے۔ انہوں نے تمام شراکت داروں جیسا کہ وفاقی اور صوبائی حکومتوں، میڈیا کی نمائندہ تنظیموں، میڈیا ہاؤسز اور صحافتی تنظیموں کی مشاورت سے ایک ایسا اداراجاتی اور موثر پرساکھ نظام بنایا جائے جو صحافیوں کے تحفظ کے لئے اقدامات کرے۔ انہوں نے حکومت سے بھی مطالبہ کیا کہ اطلاعات تک رسائی کے قانون جسے تمام سیاسی پارٹیوں نے سینیٹ میں منظور کیا ہے کی بنیاد پر فوری طور پر قانون سازی کی جائے۔ انہوں نے کہا کہ شفافیت اور احتساب کے لئے اطلاعات تک رسائی بنیادی حیثیت رکھتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت اطلاعات تک رسائی کے قانون میں تاخیر کرکے شکوک و شبہات کو جنم دے رہی ہے اور اس پر سوالات اٹھ رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اطلاعات مہیا ہونے سے شہری بااختیار ہوتے ہیں اور جب اطلاعات کا راستہ روکا جائے تو شہری بے اختیار ہو جاتے ہیں۔

مزید :

صفحہ آخر -