”میں نے اپنی ذمہ داریاں آئینی حدود کے اندر رہ کر پوری کیں“: پرویز رشید کا ڈان لیکس سے متعلق سوال پر صحافی کو جواب

”میں نے اپنی ذمہ داریاں آئینی حدود کے اندر رہ کر پوری کیں“: پرویز رشید کا ڈان ...
”میں نے اپنی ذمہ داریاں آئینی حدود کے اندر رہ کر پوری کیں“: پرویز رشید کا ڈان لیکس سے متعلق سوال پر صحافی کو جواب

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)ڈان لیکس سکینڈل پر عہدے سے مستعفی ہونے والے وزیراطلاعات پرویز رشید نے کہا ہے کہ میں نے اپنی ذمہ داریاں آئینی حدود کے اندر رہ کر پوری کیں،صحافی کو خبر پر اصل صورتحال سے آگیا کیا اور اپنا نقطہ نظر دیا۔

دروازے سے باہر نکلا ہلتا ہوا ہاتھ، دیکھ کر ہمسایوں نے پولیس بلالی، دروازہ کھولا تو اندر کیا تھا؟ دیکھ کر ہر شخص کے واقعی اوسان خطا ہوگئے، گزشتہ 30 سال سے وہاں۔۔۔

تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی چینل جیو نیوز کے مطابق سابق وزیراطلاعات پرویز رشید سے صحافی نے سوال کیا کہ ڈان لیکس سے متعلق آپ پر الزام لگا اس پر کیا کہیں گے؟ جس کا جواب دیتے ہوئے سینیٹر نے کہا کہ اس کہ اس سوال کے 2 جواب ہوسکتے ہیں، میں نے اپنی ذمہ داریاں آئینی حدود کے اندر رہ کر پوری کیں،وہی کیا جو جمہوری معاشرے میں کیا جاتاہے اور میں نے صحافی کو خبر پر اصل صورتحال سے آگاہ کیا اور نقطہ نظر دیا۔

پرویز رشید نے مزید کہا کہ ڈان لیکس پر تبصرہ نہیں کرسکتا کیونکہ رپورٹ ابھی آئی نہیں جب آئے گی تو پڑھ کر الزامات کا جواب دوں گا۔حکومتی رہنما نے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ صحافی کو مجبور نہیں کرسکتے اگر ایسا کرنا ہے تو ریاست کے اندر یونیورسٹیوں میں ایک ایسا کورس متعارف کرایا جائے جس میں بچوں کو پڑھایا جائے کہ خبر کو رکوانا کیسے ہے ،ایسا وزیراطلاعات چاہیئے جسکا کام خبر کو رکوانا ہوتو اسکی تعلیم دی جائے۔یاد رہے کہ ڈان لیکس آنے کے بعد پرویز رشید نے وفاقی وزیراطلاعات و نشریات کے عہدے سے استعفیٰ دیدیا تھا۔

مزید :

قومی -