میڈیا مثبت تنقید کرے ، صحافی کا کام خبر دینا ہے اپنی رائے نہیں : مریم اورنگزیب

میڈیا مثبت تنقید کرے ، صحافی کا کام خبر دینا ہے اپنی رائے نہیں : مریم اورنگزیب
میڈیا مثبت تنقید کرے ، صحافی کا کام خبر دینا ہے اپنی رائے نہیں : مریم اورنگزیب

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )وفاقی وزیر مملکت برائے اطلاعات مریم اورنگزیب نے کہا کہ میڈیا کی مثبت تنقید معاشرے بناتی ہے جبکہ منفی تنقید معاشروں میں تخریب کا باعث بنتی ہے۔ صحافی کا کام صرف خبر دینا ہے نہ کہ اپنی رائے دینا، میڈیا صحافتی اخلاقیات کا پابند ہونا چاہئے۔

حکومت نے نجی تعلیمی ادراروں کے لیے ریگولیٹری اتھارٹی کی منظوری دیدی:مشتاق غنی

اسلام آباد میں عالمی یوم آزادی صحافت کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر مملکت برائے اطلاعات مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ کسی بھی معاشرے میں صحافیوں کاکردارانتہائی کلیدی اوراہمیت کاحامل ہوتاہے، میڈیا کا پر امن سوسائٹی میں اہم کردار ہے ۔ میڈیا کا اپنا ضابطہ اخلاق ہے جس پر عمل کرنے کی ضرورت ہے ۔ ملکی ترقی کیلئے کثیرالجہتی منصوبوں کی تشہیرمیں میڈیاکوکرداراداکرناچاہئے۔ سینیٹ،قومی اورصوبائی اسمبلی کے بعدپریس کلب وہ جگہ ہے جہاں سب مل کربیٹھتے ہیں۔

”یہ میری بارہ سال میں چوتھی شادی ہے کیونکہ جب بھی شادی ہوتی ہے ہر مرتبہ ۔۔۔“ خاتون نے ایسی بات کہہ دی کہ جان کر آپ کا بھی دل افسردہ ہو جائے گا

مریم اورنگزیب نے اپنے فرائض کی انجام دہی کے دوران جان کی بازی ہارنے والے صحافیوں کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ صحافی معاشرے کی تعمیر کے لئے اپنے فرائض سرانجام دیتے ہیں۔اپنے فرائض انجام دینے کے دوران صحافی اپنی جانوں کی بھی پروا نہیں کرتا، معاشرے کو ایسے افراد پر فخر ہے۔

شادی کی تقریب میں دولہا کے مہمان اس کی زندگی سے متعلق تفصیلات بتانے میں ناکام ہوئے تو دلہن کے والد کو شک ہوا کہیں ۔۔۔انوکھا واقعہ پیش آگیا ،دولہا کو جیل کی ہوا کھانا پڑ گئی کیونکہ۔۔۔

وزیر مملکت کا مزید کہنا تھا کہ صحافیوں کے مسائل کے حل کے لیے حکومت ہرممکن اقدام کررہی ہے۔ صحافیوں کے مسائل حل کرنے کیلئے پر عزم ہیں۔

صحافیوں کی پیشہ وارانہ صلاحیت کواجاگرکرنے کے لئے بھی معاہدہ کیاگیاہے۔ ٹریننگ ،ویلفیئر اور اسکالر شپ صحافیوں کاحق ہے۔ ہاﺅسنگ سوسائٹیز میں بھی صحافیوں کی نمائندگی ہونی چاہئے۔ صحافیوں کے لئے قانونی تحفظ ہونا بہت ضروری ہے۔ انہوں نے صحافتی تنظیموں سے مطالبہ کیا کہ صحافیوں کے مسائل کے حل کے لئے تمام یونینزکوایک ہوجاناچاہئے

مزید :

قومی -