خاتون قتل ‘ٹریفک حادثات ‘ کرنٹ لگنے سے 4 ہلاکتیں‘ 2 بچے نہر میں ڈوب گئے

خاتون قتل ‘ٹریفک حادثات ‘ کرنٹ لگنے سے 4 ہلاکتیں‘ 2 بچے نہر میں ڈوب گئے

  

بوریوالا ‘ ساہوکا ‘ لڈن ‘ اڈا پل 14‘ کچا کھوہ ‘ گڑھا موڑ ‘ کہروڑ پکا‘منچن آباد ( نمائندگان) ٹریفک حادثات اور کرنٹ لگنے سے 4 افراد جاں بحق ہوگئے ‘ شادی شدہ خاتون کو اغواء کے بعد نقدی (بقیہ نمبر37صفحہ12پر )

و زیورات لوٹ کر قتل کر دیا گیا ‘ 2 بچے نہر میں ڈوب کر دم توڑ گئے ۔ اس سلسلے میں بوریوالا ‘ ساہوکا سے تحصیل رپورٹر ‘ نمائندہ پاکستان کے مطابق جملیرا روڑ پر بجلی کے پول سے کرنٹ لگنے سے الیکٹریشن جاں بحق ہوگیا واقعات کے مطابق پرائیویٹ الیکٹریشن محمد احمد دین نواحی گاؤں279ای بی کا رہائشی ہے اور گزشتہ روز پول پر چڑھ کر بجلی ٹھیک کر رہا تھا کہ اچانک اسے تار چھو جانے سے بجلی کا کرنٹ لگ گیا جس سے وہ موقع پر ہی جاں بحق ہو گیا شہریوں نے بتایا کہ بوریوالہ دفترشکائیت درج کروانے کے باوجود واپڈا اہلکار موقع پر نہ پہنچے تھے اس واقعہ کے خلاف اہل علاقہ نے جملیراروڑ کو اڈہ گولا پر بلاک کرکے واپڈا اہلکاروں کے خلاف شدید احتجاج کیا۔ لڈن سے نمائندہ پاکستان ‘ نامہ نگار کے مطابق لڈن کے نواحی علاقہ پل کرم واہ کا اٹھارہ سالہ نوجوان محمد آصف مئے اپنی دکان پر موجود تھا کہ فریج کی تار سے بجلی کا کرنٹ کا جھٹکا لگا جس سے وہ موقع پر ہی جاں بحق ہو گیا ،واضح رہے کہ مرحوم کے والد پہلے ہی فوت ہو چکے ہیں اور مرحوم نوجوان دو بہنوں کا اکلوتا بھائی تھا اور اپنے خاندان کا واحد خود کفیل تھا ، مرحوم نوجوان کی چند ماہ بعد شادی ہونے والی تھی ،مرحوم کی میت گھر مں پہنچنے پر کہرام مچ گیا۔ اڈا پل 14 سے نامہ نگار کے مطابق پل 14کے نواحی چک 136دس آر کا رہائشی محمد صدیق اور اس کا ساتھی خادم حسین موٹر سائیکل نمبر MNV/5200 کے ذریعے چوک میتلا کی طرف جانے کے لئے اڈا پل 14کے چوک پر پہنچا ہی تھا کہ وہاڑی سے تیز رفتار کار نمبری LEB/4669A کے ساتھ زور دارتصادم کے بعد موٹر سائیکل سوار 70 سال کا بزرگ محمد صدیق موقع پر ہی جاں بحق ہو گیا جبکہ اس کا ساتھی خادم حسین شدید زخمی ہو گیا ۔ کچا کھوہ سے نمائندہ پاکستان کے مطابق گذشتہ روز کچاکھوہ حسینی چوک روڈ کراس کرتے ہوئے ایک خاتون ٹرالے کی زد میں آکر موقع پر جانبحق ہوگئی پولیس تھانہ کچاکھوہ نے نعش کو ہسپتال جبکہ گاڑی کو تحویل میں لے لیا خاتون کی شناخت زبیدہ بی بی کے نام سے ہوگئی جبکہ ورثاء4 نے اتفاقیہ حادثہ قرار دے کر کاروائی سے انکار کردیا۔ گڑھا موڑ سے نمائندہ پاکستان کے مطابق پل165ڈبلیو بی کے قریب نہر میں نا معلوم نعش دیکھنے پر لوگوں تھانہ مترو پولیس کو اطلاع دی جس پر ایس ایچ او تھانہ مترو ظہور احمد چھینہ پولیس کی بھاری نفری کے ہمراہ موقع پر پہنچ گئے اور نعش کو نہر سے نکال کرمیلسی ہسپتال میں پوسٹ مارٹم کیلئے ریفر کر دیا۔ کہروڑ پکا سے تحصیل رپورٹر کے مطابق نواحی علا قہ امیر پور سادات کے رہا ئشی عبد العزیز بو ہڑ نے پو لیس تھا نہ صدر کو بیان دیتے ہو ئے الزام عا ئد کیا کہ اس کی بیٹی تسلیم ما ئی کی شادی 5سال قبل ریاض سے ہو ئی اور وہ اس کے پاس مکان بنوا نے کے لیے رقم لینے آ ئی تو اس کے بھا ئی اور والدہ جو کرا چی میں کام کر تے تھے نے کہا کہ کرا چی آ جا و رقم دیتے ہیں کرا چی میں سے دو لا کھ نقدی لے کر آ رہی تھی کہ ملزمان اقبال ،اللہ دتہ،عبد المجیداور دو نا معلوم نے اس کو ا غواء کر لیا اور اس کو مبینہ طور پر قتل کر کے نقدی و زیورات لوٹ لیے اور اس کی نعش کو نہر میں پھینک دیا پو لیس تھا نہ صدر نے مقد مہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی ۔صادقیہ کینال منیاں والی کے قریب دو بچے نہر میں نہاتے ہوئے ڈوب کر جاں بحق ہو گئے ،ڈوبنے والے بچوں کی شناخت ابو سفیان اور عبدالروف کے نام سے ہوئی ہے ،ریسکیو کا عمل جاری ہے تادم تحریر ڈوبنے والوں کی نعشیں نہ مل سکی ہیں ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -