سپریم کورٹ ، نوازشریف کیخلاف توہین عدالت کی درخواست خارج

سپریم کورٹ ، نوازشریف کیخلاف توہین عدالت کی درخواست خارج

  

اسلام آباد (آن لائن) سپریم کورٹ نے سابق وزیر اعظم نوازشریف کیخلاف توہین عدالت کی درخواست خارج کرتے ہوئے ریمارکس دئیے کہ نجکاری کیس میں پی آئی اے کا فرنزک آڈٹ کرایا جس سے سب کچھ معلوم ہوگیا کب اور کس کس نے پی آئی اے کوکھایا ، مقدمے کی آئندہ تاریخوں میں تمام سابق سربراہ پیش ہونگے۔ چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے سابق وزیراعظم نوازشریف کے خلاف توہین عدالت کی درخواست کی سماعت کی ، درخواستگزارنے موقف اپنایا کہ نوازشریف نے بطوروزیراعظم ڈی جی سول ایوی ایشن کی تقرری ضابطوں کے برخلاف کی تاہم عدالت نے درخواست غیر موثر ہونے پر خار کردی کیوں کہ نواز شریف کیخلاف توہین عدالت کی درخواست بطورووزیر اعظم دائر کی گئی تھی۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے ے کہ قومی ائیرلائن کا فرنزک آڈٹ کرایا جس میں سب کچھ معلوم ہوگیا کب اور کس کس نے پی آئی اے کوکھایا ، ملک کو بے دردی سے نقصان پہنچایا گیا ، چیف جسٹس نے پی آئی اے نجکاری کیس کا حوالہ دیتے ہوئے کہاکہ آئندہ تاریخوں پرتمام سابق سربراہ پیش ہونگے۔

درخواست خارج

مزید :

صفحہ آخر -