سول ایوارڈ میں من پسند کو نوازنے اور اہل افراد کو نظر انداز کرنے کیخلاف رٹ دائر

سول ایوارڈ میں من پسند کو نوازنے اور اہل افراد کو نظر انداز کرنے کیخلاف رٹ ...

  

پشاور(نیوزرپورٹر)وفاقی حکومت کی جانب سے سول ایوارڈز میں من پسندافراد کو نوازنے اوراہل افراد کو نظراندازکرنے کے خلاف پشاورہائی کورٹ میں رٹ دائرکردی گئی ہے رٹ پٹیشن سینئرصحافی اورایشیئن سپورٹس ایسوسی ایشن کے جنرل سیکرٹری امجدعزیزملک نے دائرکی ہے درخواست گذار کے وکیل محمدعلی نے موقف اختیار کیاہے کہ درخواست گذار ایک سینئرصحافی ہے اورگذشتہ تین دہائیوں سے وہ شعبہ صحافت سے وابستہ ہے جبکہ وہ فیڈرل سپورٹس رائٹرزایسوسی ایشن کے صدر اورایشیئن سپورٹس فیڈریشن کے جنرل سیکرٹری بھی ہیں جنہوں نے کئی بین ا لاقوامی اورملکی کانفرنسزمیں شرکت کی اوربہترین کمنٹیٹرز کے ایوارڈبھی وصول کئے رٹ کے مطابق درخواست گذار کی ساری زندگی صحافت اورکھیلوں کی سرگرمیوں سے متعلق خدمات میں گذری ہے وہ ملک سعد ٹرسٹ کے بانی صدر بھی ہیں اورانہی خدمات کے اعتراف میں ان کانام پرائڈآف پرفارمنس کے لئے2014-15میں بھی نامزدگی ہوئی لیکن بعدازاں حتمی فہرست سے نام نکال لیاگیااسی طرح سال2017-18کے سول ایوارڈز کے لئے انہیں ایک مرتبہ پھرنامزد کیاگیااوراس کی باقاعدہ منظوری کیبنٹ ڈویژن اورایوارڈ سے متعلق سب کمیٹی نے بھی دی جس کی باقاعدہ ا طلاع اس کوفون کے ذریعے دی گئی جبکہ اسے حتمی فہرست بھی فراہم کردی گئی لیکن وزیراعظم کے پرنسپل سیکرٹری نے ایک میٹنگ کاانعقاد کیااوراپنے اختیارات سے تجاوز کرتے ہوئے حتمی فہرست دوبارہ مرتب کی گئی اوردرخواست گذار کانام ایک مرتبہ پھرنکال لیاگیاجس پرانہوں نے چیف جسٹس آف پاکستان کوبھی خط لکھاہے لہذارٹ پٹیشن منظورکرکے درخواست گذارکانام حتمی فہرست میں شامل کرنے کے احکامات جاری کئے جائیں اورنئی فہرست میں درخواست گذارکانام شامل کیاجائے رٹ میں وفاقی سیکرٹری اطلاعات ٗ سیکرٹری کیبنٹ ڈویژن ٗ پرنسپل سیکرٹری ٹو وزیراعظم ٗ چیف سیکرٹری خیبرپختونخوا اورسیکرٹری اطلاعات خیبرپختونخوا کوفریق بنایاگیاہے رٹ کی سماعت پشاورہائی کورٹ کادورکنی بنچ آئندہ چند روز میں کرے گا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -