نواب شاہ میں کرہ ارض پر تاریخ کی سب سے زیادہ گرمی پڑنے کا انکشاف

نواب شاہ میں کرہ ارض پر تاریخ کی سب سے زیادہ گرمی پڑنے کا انکشاف
نواب شاہ میں کرہ ارض پر تاریخ کی سب سے زیادہ گرمی پڑنے کا انکشاف

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

بینظیر آباد(ویب ڈیسک )پیر 30 اپریل کو پاکستان کے جنوبی علاقے میں واقع ضلع نوابشاہ میں درجہ حرارت 122.4 ڈگری فارن ہائٹ (50.2ڈگری سیٹی گریڈ ہوگیا تھا ) یہ دنیا کی اب تک کی تاریخ میں ماہ اپریل کے دوران کرہ ارض پر پڑنے والی سب سے زیادہ گرمی تھی ، واضح رہے کہ نوابشاہ کی آبادی تقریباً 11 لاکھ ہے ۔

یوٹیوب چینل سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ کے مطابق موسمیات کے فرانسیسی ماہر ایٹائنے کا پیکیان نے اپنے ٹویٹ میں بتایا کہ نہ صرف پاکستان بلکہ تمام ایشیائی ممالک میں اپریل کے دوران ریکارڈ کئے گئے درجہ حرارت میں یہ سب سے زیادہ تھا ۔ کرسٹوفربرٹ (جو عالمی سطح پر موسم میں ہونے والی تبدیلیوں پر گہری نظر رکھتے ہیں ) نے ایک قدم آگے بڑھ کر بتایا کہ پیر 30 اپریل کو نوابشاہ مین ریکارڈ کیا گیا درجہ حرارت اس زمین کی حالیہ تاریخ میں ریکارڈ کئے گئے ٹمپریچرز میں سب سے زیادہ تھا ، انہوں نے کہا کہ میکسیکو کے علاقے سانتاروسا کے بارے میں بعض لوگوں نے بتایا کہ وہاں پیر کو درجہ حرارت 51 ڈگری سینٹی گریڈ یعنی نوابشاہ سے کچھ زیادہ تھا ، تاہم انہوں نے کہا کہ اس بیان کی کسی بھی قابل اعتبار ذریعے سے تصدیق نہیں ہو سکی ، اس لیے اس دعوے کو درست قرار نہیں دیا جا سکتا۔

یہاں یہ ذکر ضروری ہے کہ رواں سال مارچ میں بھی نوابشاہ میں شیدید گرمی پڑی تھی ، اس طرح اپریل نوابشاہ کیلئے متواتر شدید گرمی کا دوسرا ماہ ثابت ہوا، یہاں جو درجہ حرارت رہا وہ بلاشبہ پورے پاکستان سے زیادہ تھا ، برطانوی اخبار گارڈین کے مطابق نوابشاہ کے شہری گرمی سے تنگ آکر ہجرت کا سوچ رہے ہیں ، شدید گرمی کی یہ لہر نوابشاہ اور پاکستان تک محدود نہیں رہی بلکہ اس نے بھارت کو بھی اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے ، ان بھارتی علاقوں میں نئی دہلی بھی شامل تھا ، کرسٹو فربرٹ نے مزید بتایا کہ روس بھی فرمی کی اس شدت سے محفوظ نہیں رہ سکا ، موسمیات سے متعلق عالمی ادارے“ ویدرانڈرگراﺅنڈ ” نے کہا کہ 2017 کے دوران سپی اور ایران سمیت متعدد ممالک میں درجہ حرارت بہت زیاہد ہوگیا تھا ۔

مئی 2017 کے دوران پاکستانی علاقے تربیت میں درجہ حرارت بڑھ کر 128.3 فارن ہائٹ ہوگیا تھا ، یہ درجہ حرارت نہ صرف اس علاقے بلکہ پاکستان سمیت دنیا بھر میں بہت زیادہ تھا ۔ مختلف وجوہ کی بنا پر ایسی گیسز ماحول پر طاری ہوتی جا رہی ہیں جو گرمی میں اضافے کا باعث ہوتی ہیں ، اس لیے لوگوں کو ذہنی طور پر گرمی میں مزید اضافے کیلئے تیار رہنا چاہیے۔

مزید : علاقائی /سندھ /بنظرآباد