مقامی حکومتیں ایک سال سے لاوارث ہیں،عظمیٰ بخاری

مقامی حکومتیں ایک سال سے لاوارث ہیں،عظمیٰ بخاری

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)مسلم لیگ (ن) پنجاب کی ترجمان عظمیٰ بخاری نے کہا ہے کہ بزدار حکومت نے منتخب بلدیاتی نمائندوں کو ہٹاکر جمہوریت پر شب خون مارا۔ایک سال سے مقامی حکومتیں لاوارث ہیں۔بزدار حکومت نے لوکل گورنمنٹ کا نظام چلانے کیلئے من پسند 51افسران کو بھرتی کیا۔آج اگر پنجاب میں لوکل گورنمنٹ ہوتی تو ٹائیگرفورس اور احساس پروگرام جیسی ڈرامے بازی کی ضرورت پیش نہ آتی۔عمران خان یورب کی مثالیں دیتے ہیں لیکن پورا یورپ لوکل گورنمنٹ کے تحت چل رہا ہے۔

عثمان بزدار ہر پروگرام،ہر منصوبے اور ہر پروجیکٹ میں اپنا ذاتی فائدہ تلاش کرتے ہیں۔مسلم لیگ (ن) پنجاب کی ترجمان عظمیٰ بخاری کا پنجاب لوکل گورنمنٹ بل 2019پر ردعمل میں کہالوکل گورنمنٹ کی عدم موجودگی میں گلی محلوں کے مسائل نظر انداز ہورہے ہیں۔گلی محلوں میں لائٹس،گٹرکے ڈکن،نالیوں کی تعمیر اور صفائی کا نظام لوکل گورنمنٹ کے نمائندوں کے انڈر ہوتا ہے۔عثمان بزدار نے لوکل گورنمنٹ کے نمائندوں سے اختیارات چھین کو صوبے کے عوام کو سزادی ہیں۔شہبازشریف حکومت نے پنجاب میں لوکل گورنمنٹ کے نمائندوں کو بااختیار بنایا۔سابقہ دور میں بلاتفریق ہر حلقے میں ترقیاتی کام ہوئے۔موجودہ حکومت نے اپوزیشن کے حلقوں کو نظرانداز کرکے حکومتی رہنماوں کے حلقوں کیلئے اربوں کے فنڈز جاری کیے۔دو سالوں میں پنجاب حکومت اورنج لائن ٹرین کا 20فیصد کام مکمل نہیں کرسکی۔شہبازشریف پنجاب کے عوام کیلئے رحمت اور عثمان بزدار زحمت بن چکے ہیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -