بلاول بھٹو اور سندھ حکومت اپنی ناکامیوں کا ملبہ وفاق پر نہ گرائیں:شبلی فراز

  بلاول بھٹو اور سندھ حکومت اپنی ناکامیوں کا ملبہ وفاق پر نہ گرائیں:شبلی فراز

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات سینیٹر شبلی فراز کا کہنا ہے کہ بلاول صاحب!لاک ڈاؤن کرنے یا نہ کرنے میں سندھ حکومت آزاد تھی اور ہے، وفاق پر سوالات کس منہ سے اٹھائے جارہے ہیں؟ بلاول بھٹو اور سندھ حکومت اپنی ناکامیوں کا ملبہ وفاق پر نہ گرائیں۔پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنماؤں کی پریس کانفرنس کے رد عمل کے بعد سینیٹر شبلی فراز کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی سیاست کے بجائے سندھ میں کورونا وائرس کنٹرول کرنے کی طرف توجہ مرکوز کرے، بلاول بھٹو اور ان کے صوبائی وزراء کام کرنے کی بجائے لمبی لمبی پریس کانفرنسیں کر رہے ہیں۔وفاقی وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ اپوزیشن سیاست کے بجائے کورونا کے خلاف جنگ میں وزیراعظم کا ساتھ دے۔ وفاق کی جانب سے سندھ کو کورونا پر قابوپانے کیلئے دی جانے والی امداد ان کی لاعلمی کا پول کھول رہی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ بجلی کے بلوں میں سندھ انڈسٹریل کے 45 ہزار جبکہ کمرشل کے 7 لاکھ 17 ہزار صارفین کو بل کی ادائیگی میں ریلیف دیا، چھوٹیکاروبار کرنے والوں کو بھی بلوں کی ادائیگی میں یہی سہولت دی گئی، یوٹیلیٹی سٹورز کے ذریعے ملک کے دیگر حصوں کی طرح سندھ کے عوام بھی مستفید ہوئے۔سینیٹر شبلی فراز کا مزید کہنا تھا کہ سٹیٹ بینک آف پاکستان کی ڈیفرڈ سکیم کے تحت قرضوں کی قسطوں کی ادائیگی میں سہولت دی گئی ہے، یہ سکیم سندھ میں بھی اپلائی ہوگی، 1.2کھرب کا امدادی پیکج سندھ سمیت تمام صوبوں میں تقسیم ہوگا۔وفاقی وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ چھوٹے تاجروں اور کاروبار کرنے والے مالکان کو اپنے ورکرز کی تنخواہوں کی ادائیگی کیلئے سہولتی پیکیج دیا گیا ہے، احساس کیش ایمرجنسی پروگرام کے تحت اب تک 27 ارب روپے سندھ میں تقسیم کیے جا چکے ہیں۔ان کا مزید کہنا تھا کہ سندھ حکومت کو وفاق کی جانب سے 504447 فیس ماسکس،290986 سرجیکل ماسکس،30142 این 95 ماسکس،203840 کے این 95 ماسکس جبکہ 148334 حفاظتی سوٹس فراہم کیے گئے ہیں، فراہم کردہ سامان میں 77992 ٹیسٹنگ کٹس،200 تھرمل گنز،25000وی ٹی ایم اور پی سی آر مشینیں شامل ہیں۔سینیٹر شبلی فراز کا مزید کہنا تھا کہ وفاق کی جانب سے سندھ حکومت کو کثیر تعداد میں ہینڈ سینیٹائزر، ہینڈ واش، سوپ کیمیکل سپریز، بائیو ہیزرڈ بیگز،سیفٹی باکسز اور باڈی بیگز فراہم کیے گئے ہیں، بلاول صاحب خود کو سیاست میں زندہ رکھنے کیلئے قومی اتحاد اور یکجہتی کی فضا کو پارہ پارہ نہ کریں۔

شبلی فراز

مزید :

صفحہ اول -