کورونا علاج،امریکہ میں ”ریمڈیسی ویئر“کا استعمال سرکاری سطح پر منظور

  کورونا علاج،امریکہ میں ”ریمڈیسی ویئر“کا استعمال سرکاری سطح پر منظور

  

واشنگٹن(اظہر زمان، بیوروچیف) امریکہ میں کورونا وائرس کے علاج کیلئے سب سے زیادہ جس دوا ”ریمڈیسی ویئر“ سے امیدیں وابستہ کی جارہی ہیں، سرکاری ادارے ایف ڈی اے نے اس کی منظوری دیدی ہے۔ صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے دوا ساز کمپنی ”جیلڈ“ کے سربراہ سے وائٹ ہاؤس میں ملاقات کے بعد یہ اعلان کیا،اور اس امر پر اظہار اطمینان کہا کہ اس کے ذریعے وباء کو کنٹرول کرنے میں بہت مدد ملے گی۔ اس موقع پر نائب صدر مائیک پنس نے بتایا کہ کمپنی نے اس دوا ء کی 15لاکھ خوراکیں عطیہ کے طور پر فراہم کی ہیں، جو ایک لاکھ40ہزار متاثرین کیلئے کافی ہونگی۔ انہوں نے بتایا کہ سوموار کے روز یہ دوا ان ہسپتالوں میں فراہم کردی جائے گی، جہاں اس کی سب سے زیادہ ضر ورت ہوسکتی ہے۔ ”ر یمڈیسی ویئر“ کے موثر ہونے کے بارے میں وائٹ ہاؤس کی انسداد کورونا وائرس ٹاسک فورس کے میڈیکل رکن ڈا کٹر انتھونی فاچی قبل ازیں اظہار رائے کرچکے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ انفیکشن کے آغاز کے وقت اس دوا کا استعمال مفید ثابت ہوا ہے،اور آدھے سے زیادہ مریض زیادہ تیزی کیساتھ صحت یاب ہوئے ہیں۔ ابھی کورونا وائرس کیلئے ویکسینز کی تیاریاں ہورہی ہیں، جن کے قابل اعتماد استعمال کیلئے کم از کم ایک سال کا عرصہ درکار ہے۔ اس وجہ سے علاج کیلئے ”ریمڈیسی ویئر“ میں مختلف ممالک گہری دلچسپی لے رہے ہیں۔

ریمڈیسی ویئر دوا

مزید :

صفحہ اول -